’دہشت گردوں کے مکمل خاتمے تک ان کا پیچھا کیاجائے گا‘

تصویر کے کاپی رائٹ ISPR
Image caption جنرل راحیل نے فوجیوں پر زوردیا کہ وہ ضرب عضب آپریشن کے دوران تمام ملکی و غیر ملکی دہشت گردوں اور ان کے ٹھکانوں کا خاتمہ کریں

پاکستانی بّری فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے شمالی وزیرستان کے دورے پر کہا کہ دہشت گردوں کے مکمل خاتمے تک اُن کا پیچھا کیاجائے گا۔

پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ بری فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ملک سے دہشتگردوں کے مکمل خاتمے تک اُن کا پیچھا کیاجائے گا۔

پیر کو شمالی وزیرستان ایجنسی کے دورے کے موقع پر جنرل راحیل شریف نے میران شاہ میں اگلے مورچوں کا دورہ کیا۔

جنرل راحیل نے فوجیوں پر زوردیا کہ وہ ضرب عضب آپریشن کے دوران تمام ملکی و غیر ملکی دہشت گردوں اور ان کے ٹھکانوں کا خاتمہ کریں۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ جنرل راحیل نے کہا کہ فوج کو پوری قوم کی حمایت حاصل ہے اور کہا کہ غیر متزلزل قومی عزم اور واضح سمت میں آگے بڑھتے ہوئے ’ہم اپنے مشن کو مکمل کریں گے اور پاکستان سے دہشت گردی کا خاتمہ کریں گے‘۔

جنرل راحیل نے حکومت کی عملداری بحال کرنے کے لیے بے گھر افراد کی قربانیوں کو خراج تحسین پیش کیا۔ اُنہوں نے پھر کہا کہ فوج مشکل کی اس گھڑی میں اپنے قبائلی بھائیوں کو تنہا نہیں چھوڑے گی اور اُنہیں ہر ممکن مدد فراہم کرے گی۔

اُنہوں نے غیر معمولی حالات سے دوچار شمالی وزیرستان ایجنسی کی تنظیم نو اور حالات معمول پر لانے میں فوج کے کردار کا یقین بھی دلایا۔

اس سے قبل جنرل آفیسر کمانڈنگ نے بّری فوج کے سربراہ کو جاری آپریشن کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔

اسی بارے میں