پاکستانی نژاد امریکی پائلٹ جہاز حادثے میں ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ facebook
Image caption پاکستانی سفارت خانے کے مطابق بابر سلیمان کا تعلق پاکستانی ایئر فورس کے سابق چیف راؤ قمر سلیمان کے خاندان سے ہے

جہاز کے ذریعے دنیا کے گرد چکر لگانے کی کوشش میں ایک پاکستانی نژاد امریکی شہری بابر سلیمان کا جہاز حادثے کا شکار ہو گیا۔

امریکی كوسٹ گارڈ کے مطابق بابر سلیمان کے ساتھ جہاز میں سوار ان کے 17 سالہ بیٹے حارث سلیمان کی لاش برآمد ہو گئی ہے تاہم بابر سلیمان اب بھی لاپتہ ہیں۔

امریکی کوسٹ گارڈ کا کہنا ہے کہ بابر کی تلاش جاری ہے لیکن نہ تو جہاز اور نہ ہی ان کا ابھی تک کچھ پتہ چل سکا ہے۔

امریکی كوسٹ گارڈ کے مطابق یہ حادثہ امریکن سماؤ کے دارالحکومت پاگو پاگو شہر سے پرواز کے فوراً بعد ہوا اور حادثے کی وجہ معلوم نہیں ہو سکی۔

كوسٹ گارڈ کا کہنا ہے کہ امریکی ریاست انڈیانا میں مقیم ان کے خاندان کو اس حادثے کی اطلاع دے دی گئی ہے۔

بابر سلیمان خاندان کے ایک قریبی دوست میاں وسیم نے بی بی سی کو بتایا کہ انھوں نے یہ مشن 19 جون سے شروع کیا تھا اور اس سے ملنے والی رقم سے وہ پاکستان کے ایک گاؤں میں سکول کھولنا چاہتے تھے۔

میاں وسیم کے مطابق بابر سلیمان پاکستانی ایئر فورس سے ریٹائرمنٹ لینے کے بعد امریکہ آ گئے تھے اور انھوں نے اپنا بزنس شروع کیا تھا۔

انھوں نے بتایا کہ بابر سلیمان کے پاس دو جہاز تھے جن سے وہ وی آئی پی كسٹمرز کو ایک جگہ سے دوسری جگہ لے جاتے تھے۔ ان کے بیٹے حارث کو بھی پرواز کا شوق تھا اور انھوں نے بھی پائلٹ کا لائسنس حاصل کر رکھا تھا۔

پاکستانی سفارت خانے کے مطابق بابر سلیمان کا تعلق پاکستانی ایئر فورس کے سابق چیف راؤ قمر سلیمان کے خاندان سے ہے۔