سرکاری ٹی وی سے منسلک صحافی 11 روز سے لاپتہ

تصویر کے کاپی رائٹ bbc
Image caption صحافی منظور احمد بگٹی 7 نومبر سے لاپتہ ہیں

پاکستان کے صوبہ بلوچستان میں سرکاری ٹی وی سے منسلک صحافی منظور احمد بگٹی گذشتہ 11 روز سے لاپتہ ہیں۔

ان کے چچا امام بخش بگٹی نے کوئٹہ میں میڈیا کے نمائندوں کو بتایا کہ 7 نومبر کو وہ کوئٹہ شہر سے اپنے ایک دوست سلیم بگٹی کے ہمراہ لاپتہ ہوئے۔ ان کا کہنا تھا کہ لاپتہ ہونے والا صحافی ڈیرہ بگٹی سے پاکستان ٹیلی ویژن کے لیے رپورٹنگ کر رہا تھا۔

امام بخش بگٹی نے جو خود بھی ایک خبر رساں ادارے سے منسلک ہیں بتایا کہ منظور بگٹی اپنے دوست سلیم بگٹی کے ہمراہ 6 نومبر کو ڈیرہ بگٹی سے کوئٹہ آئے تھے۔ انہوں نے بتایا کہ 7دسمبر کو ان کے بھتیجے نے وائٹ روڈ سے اپنے ایک دوست سے گاڑی لی۔

’جس دوست سے انہوں نے گاڑی لی ان کو یہ کہا کہ وہ دو گھنٹے بعد واپس آئیں گے، لیکن وہ واپس نہیں آئے اور 7 نومبر سے لیکر اب تک ان کا کوئی سراغ نہیں ملا۔‘

امام بخش بگٹی کا کہنا تھا کہ 7 نومبر کو صبح 9 بجے تک ان کا منظور بگٹی سے رابطہ تھا لیکن اس کے بعد سے ان کا موبائل فون بند ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ ان کی گمشدگی کا مقدمہ کوئٹہ کے سول لائنز پولیس سٹیشن میں درج کر لیا گیا ہے۔

امام بخش بگٹی کا کہنا تھا کہ یہ معلوم نہیں ہوسکا ہے کہ منظور احمد بگٹی کو کسی نے تاوان کی غرض سے اغوا کیا ہے یا ان کی گمشدگی کے محرکات کچھ اور ہیں۔

سرکاری ٹی وی، پی ٹی وی کے ایک اہلکار نے بی بی سی کو تصدیق کی کہ منظور احمد بگٹی پی ٹی وی کے لیے کام کرتے تھے۔

اسی بارے میں