ضلع بونیر میں دو پولیس اہلکار ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption اس علاقے میں سکیورٹی فورسز کی طرف سے وقتاً فوقتاً سرچ آپریشن بھی کیے گئے ہیں

صوبہ خیبر پختونخوا کے ضلع بونیر میں پولیس حکام کے مطابق نامعلوم افراد نے دو پولیس اہلکاروں کو اس وقت گولیاں مارکر ہلاک کردیا جب وہ ڈیوٹی کے لیے جارہے تھے۔

بی بی سی کے نامہ نگار انور شاہ نے بتایا کہ تھانہ پیربابا کے ایس ایچ او شیر ولی خان نے بی بی سی کو بتایا کہ ’دونوں پولیس اہلکاروں کو اتوار کے دن سپیشل ڈیوٹی کے لیے بلایا گیا تھا۔‘

’اتوار کی شام وہ واپس ایلم کی پہاڑی کے قریب واقع پولیس سٹیشن اگارت کی جانب جارہے تھے کہ نامعلوم دہشت گردوں نے انھیں قتل کردیا۔‘

دونوں پولیس اہلکاروں دین محمد اور عثمان کی لاشیں پوسٹ مارٹم کے لیے ڈگر ہسپتال منتقل کردی گئی ہیں۔

پولیس کے مطابق علاقے میں سرچ آپریشن شروع کردیا گیا ہے تاہم آخری اطلاعات تک گرفتاری عمل میں نہیں آ سکی ہے۔

خیال رہے کہ بونیر کا یہ علاقہ ماضی میں عسکریت پسندوں کا گڑھ رہا ہے اور امن کی بحالی کے بعد بھی یہاں تخریبی کاروائیاں ہوتی رہی ہیں۔

اس علاقے میں سکیورٹی فورسز کی طرف سے وقتاً فوقتاً سرچ آپریشن بھی کیے گئے ہیں۔

اس واقعے کے بعد علاقے میں خوف کی فضا ہے اور لوگ تشویش کا اظہار کررہے ہیں۔

اسی بارے میں