نادرن ٹرانسمیشن لائن ٹرپ، بجلی کی بحالی پر کام جاری

Image caption وزیراعظم کا کہنا ہے کہ پٹرولیئم مصنوعات کی قیمتوں میں بھی مزید کمی کی جائے گی

وفاقی وزارت برائے بجلی و پانی کا کہنا ہے کہ جمعہ کو نیشنل گرڈ میں خرابی کے باعث وفاقی دارالحکومت اسلام آباد اور صوبہ پنجاب کو بجلی کی فراہمی ’جزوی‘ طور پر معطل ہو گئی تھی۔

وزارت پانی وبجلی کے ترجمان ظفریاب خان نے بی بی سی کو بتایا کہ اسلام آباد اور پنجاب کو بجلی کی فراہمی نیشنل گرڈ میں اچانک خرابی کے وجہ سے جزوی طور پر معطل ہوئی تھی جس کی بحالی کا سلسلہ جاری ہے۔

تاہم وزارت پانی وبجلی کے ترجمان نے یہ بتانے سے گریز کیا کہ نیشنل ٹرانسمیشن میں خرابی شروع کہاں سے ہوئی تھی۔

ظفریاب خان کا کہنا تھا کہ فنی خرابی کے باعث شمالی علاقوں سے جنوبی علاقوں کی جانب 500 کے وی گرڈ سٹیشن سے منسلک لائنز متاثر ہوئیں۔

ان کا کہنا تھا کہ 500 کے وی گرڈ سٹیشن سے منسلک لائنز میں خرابی کی وجہ فریکوئنسی کا کم ہونا تھا تاہم فریکوئنسی میں کمی کی اصل وجہ ابھی معلوم نہیں ہوسکی۔

وزارت پانی وبجلی کے ترجمان نے مزید بتایا کہ گرڈ سٹیشن میں خرابی کی وجہ سے مشینیں اور فیڈرز بند ہوگئے تھے اور پنجاب اور وفاقی دارالحکومت کے مختلف علاقوں میں بجلی کی سپلائی جزوی طور پر معطل ہوگئی تھی۔

ان کا کہنا تھا کہ اس وقت شمال سے جنوب تک مختلف متاثرہ علاقوں میں بجلی کی بحالی کا سلسلہ جاری ہے۔ ’ملتان میں بجلی بحال ہو رہی ہے جس کے بعد گدو کے علاقے میں بجلی کی بحالی کا کام ہو گا۔‘

تاہم مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق تربیلا پاور ہاؤس میں فنی خرابی کے باعث غازی بروتھا سے بھی بجلی کی پیداوار بند ہوگئی جس کے نتیجے میں نادرن ٹرانسمیشن لائن ٹرپ کر گئی۔

مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق پنجاب کے علاوہ صوبہ خیبر پختونخوا کے بعض علاقے بھی پاور بریک ڈاؤن کی وجہ سے متاثر ہوئے ہیں۔

جمعے کو بجلی کی ترسیل کا نظام ایک ایسے وقت متاثر ہوا جب وزیراعظم محمد نواز شریف نے بجلی کی قیمت میں دو روپے 32 پیسے فی یونٹ کمی کا اعلان کیا ہے۔

Image caption پاکستان میں بجلی کا کمی کا بحران کئی سالوں سے جاری ہے

پشاور میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے میاں نواز شریف نے کہا کہ عوام کو سستی بجلی کی فراہمی حکومت کی اولین ترجیح ہے۔

’سستی بجلی کے باعث افراطِ زر میں خاطر خواہ کمی آئے گی اور صنعتی پیداوار بڑھے گی۔‘

نواز شریف نے کہا کہ اگلے مہینے سے پٹرولیئم مصنوعات کی قیمتوں میں بھی مزید کمی کی جائے گی۔

انھوں نے بتایا کہ بجلی اور پٹرولیئم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی سے کاشت کاروں کو براہِ راست فائدہ ہو گا۔

انھوں نے کہا کہ پاکستان ایران گیس پائپ لائن منصوبے پر کام جلد شروع کیا جائے گا اور اس منصوبے کے تحت گوادر سے نواب شاہ تک پائپ لائن بچھائی جائے گی۔

انھوں نے کہا کہ توانائی کے متعدد منصوبوں پر کام جاری ہے جن کی تکمیل سے ملک میں لوڈشیڈنگ کے خاتمے میں مدد ملے گی۔

اسی بارے میں