چینی منصوبوں کی حفاظت کے لیے خصوصی سکیورٹی ڈویژن

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption یہ ڈویژن ملک میں مختلف علاقوں میں شروع کیے گئے ترقیاتی کاموں پر نہ صرف چینی باشندوں بلکہ ان منصوبوں کی حفاظت کے لیے بھی تعینات ہو گا

پاکستانی فوج نے ملک میں چین کی طرف سے شروع کیے گئے مختلف ترقیاتی منصوبوں کی حفاظت کے لیے خصوصی سیکورٹی ڈویژن کے قیام کا اعلان کیا ہے۔

فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل عاصم سلیم باجوہ کی جانب سے کی جانے والی ٹویٹ کے مطابق اس سیکیورٹی ڈویژن میں پاک فوج کی نو بٹالین جبکہ سول آرمڈ فورسز کے چھ ونگ شامل ہوں گے۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق یہ ڈویژن پاکستان اور چین کے درمیان اقتصادی منصوبوں کی سکیورٹی کے لیے ہو گی اور اس ڈویژن کی کمان پاکستانی فوج کا میجر جنرل رینک کا افسر کرے گا۔

چین کے صدر کے پاکستان کے حالیہ دورے کے دوران دونوں ملکوں کے درمیان 45 ارب ڈالر کے منصوبوں کے معاہدوں پر دستخط کیے گئے ہیں اور ان میں زیادہ تر منصوبے توانائی اور انفراسٹرکچر سے متعلق ہیں۔

یہ ڈویژن ملک میں مختلف علاقوں میں شروع کیے گئے ترقیاتی کاموں پر نہ صرف چینی باشندوں بلکہ ان منصوبوں کی حفاظت کے لیے بھی تعینات ہو گا۔

سیکیورٹی ذرائع کے مطابق فوج کی ایک بٹالین میں پانچ سو سے لیکر آٹھ سو افراد ہوتے ہیں جبکہ سویلین ونگ میں بھی اتنے ہی اہلکار ہوں گے۔

دفاعی تجزیہ نگاروں کا کہنا ہے کہ اس ڈویژن کی تشکیل سے دنوں ملکوں کے درمیان اعتماد میں اضافہ ہوگا جس سے دوسرے ممالک بھی پاکستان میں سرمایہ کاری کرنے کی طرف راغب ہوں گے۔

منصوبہ بندی کے وفاقی وزیر احسن اقبال کے مطابق دونوں ملکوں کے درمیان ترقیاتی منصوبوں کے لیے سول آرمڈ فورسز کی تربیت بھی پاکستانی افواج ہی کرر ہی ہیں۔ اُنھوں نے کہا ان منصوبوں میں چینی ماہرین اور مزدور مختلف مراحل میں پاکستان آئیں گے اور اسی حساب سے سیکیورٹی کے انتظامات کیے جائیں گے۔

واضح رہے کہ وزارت داخلہ کے ادارے نیشنل کرائسز مینجمنٹ سیل کی طرف سے جاری کیے جانے والے متعدد سیکیورٹی الرٹ میں کالعدم تنظیموں کی طرف سے چینی باشندوں کو ممکنہ طور پر نقصان پہنچانے کا ذکر کیا جاتا رہا ہے جو پاکستان میں مختلف منصوبوں پر کام کررہے تھے۔

حکومت وقت ان منصوبوں پر کام کرنے والے غیر ملکیوں اور باالخصوص چینی باشندوں کی سیکیورٹی سخت کرنے سے متعلق پولیس اور متعقلہ اداروں کو ہدایات جاری کرتی رہی ہیں۔

اسی بارے میں