رینجرز، بی ایس ایف سربراہان کا اجلاس نو ستمبر سے دہلی میں

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption یہ اجلاس نو ستمبر سے 13 ستمبر تک ہو گا

پاکستان کے عسکری ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستانی رینجرز اور بھارتی بارڈر سکیورٹی فورسز کے سربراہوں کے درمیان ستمبر میں بھارت کے دارالحکومت دہلی میں ملاقات ہو گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اس اجلاس کے سلسلے میں گذشتہ روز یعنی منگل کو واہگہ بارڈر پر رینجرز اور بی ایس ایف کے درمیان میٹنگ ہوئی۔

اس میٹنگ میں ستمبر میں دہلی میں ہونے والے اجلاس کے طریقہ کار کو حتمی شکل دی گئی۔

یہ ملاقات ڈی جی رینجرز اور آئی جی بی ایس ایف کے درمیان ہو گی۔

عسکری ذرائع کا کہنا ہے کہ ’یہ اجلاس معمول کا اجلاس ہے جو 1961 کے قواعد کے تحت ہو گا۔ 1961 قواعد کے تحت ڈی جی رینجرز اور آئی جی بی ایس ایف کے درمیان سال میں دو بار اجلاس ہوتا ہے۔‘

یہ اجلاس نو ستمبر سے 13 ستمبر تک ہو گا۔

یاد رہے کہ پاکستان اور بھارت کے قومی سکیورٹی مشیروں کے درمیان 22 اگست کو دہلی میں ملاقات ہونی تھی جو منسوخ ہو گئی تھی۔

بھارت کی وزارتِ خارجہ نے کہا تھا کہ بھارت کی جانب سے پاکستان کو بتایا گیا ہے کہ قومی سلامتی کے مشیروں کی بات چیت سے قبل استقبالیہ میں بھارت کے زیر انتظام کشمیر کے رہنماؤں کو مدعو کرنا مناسب نہیں ہے۔

پاکستان نے بھارت کی جانب سے قومی سلامتی کے مشیروں کے درمیان نئی دہلی میں مذاکرات کے موقع پر سرتاج عزیز کی کشمیر کے علیحدگی پسند رہنماؤں سے ملاقات نہ کرنے کی تجویز مسترد کر دی تھی۔

مذاکرات منسوخ ہونے کے بعد خدشہ ظاہر کیا جا رہا تھا کہ دونوں ملکوں کے فوجی افسروں اور سرحدی محافظوں کے درمیان آئندہ ماہ طے شدہ ملاقاتیں بھی کھٹائی میں پڑ سکتی ہیں۔

اسی بارے میں