لودھراں ضمنی انتخاب، غیر حتمیٰ غیر سرکاری نتائج، جہانگیر ترین کامیاب

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے شہر لودھراں میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 154 میں ہونے والے ضمنی انتخاب میں پاکستان تحریکِ انصاف کے جہانگیر ترین نے مسلم لیگ نواز کے صدیق بلوچ کو شکست دیدی ہے۔

قومی اسمبلی کے اس حلقے سے مسلم لیگ نواز کے صدیق بلوچ اور پاکستان تحریکِ انصاف کے جہانگیر خان ترین کے علاوہ 20 دیگر امیدوارں کے درمیان مقابلہ تھا۔

لودھراں میں ضمنی انتخابات کے خلاف حکم امتناعی

این اے 154 کا الیکشن بھی کالعدم، دوبارہ انتخاب کا حکم

پاکستان تحریک انصاف نے سنہ 2013 کے عام انتخابات میں قومی اسمبلی کے اس حلقے میں دھاندلی کے الزامات عائد کیے تھے۔ جس کے بعد الیکشن ٹربیونل نے انتخابات کو کالعدم قرار دے کر دوبارہ انتخاب منعقد کروانے کا حکم دیا تھا۔

انتخاب کے غیر حتمیٰ غیر سرکاری نتائج کے مطابق پاکستان تحریکِ انصاف کے جہانگیر ترین نے مسلم لیگ نواز کے صدیق بلوچ کو واضح اکثریت سے شکست دے دی ہے۔

الیکش کمیشن کی جانب سے قومی اسمبلی کے اس حلقے میں پولنگ کے لیے 303 پولنگ سٹیشنز قائم کیے گئےتھے۔ ان پولنگ سٹیشنز میں سے 47 کو انتہائی حساس جبکہ 97 کو حساس قرار دیا گیا تھا۔

ضمنی انتخاب کے لیے کل 1,400 پولنگ بوتھ بنائے گئے اور رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد چار لاکھ، 19 ہزار، 183 ہے۔

این اے 154 میں 3,500 پولیس اہلکاوں کے علاوہ فوج کے 2,000 جوان سکیورٹی کے فرائض سر انجام دیے۔

مقامی انتظامیہ کی جانب سے لودھراں میں ضمنی انتخاب کے دوران عام تعطیل کا اعلان کیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ پاکستان کی سپریم کورٹ نے 29 ستمبر کولودھراں میں قومی اسمبلی کے حلقہ 154 کے انتخابات کو کالعدم قرار دینے کے الیکشن ٹربیونل کے فیصلے کے خلاف حکم امتناعی جاری کیا تھا۔

اسی بارے میں