بلدیاتی نمائندوں کی حلف برداری، تاریخ کا نوٹیفیکیشن جاری

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service

الیکشن کمیشن سندھ نے متحدہ قومی موومنٹ کے احتجاج کے بعد آخرکار بلدیاتی نمائندوں کی حلف برداری کی حتمی تاریخ کا نوٹیفیکیشن جاری کر دیا ہے۔

جس کے مطابق نو منتخب نمائندے 14 جنوری کو حلف اٹھائیں گے۔ جس کےبعد خواتین، غیرمسلموں، نوجوانوں اور مزدور یا کسان کی مخصوص نشستوں پر انتخابات کا انعقادہوگا۔

سندھ الیکشن کمیشن کی جانب سے منگل کو جاری کیے گئے نوٹیفیکیشن کے مطابق سندھ میں ہر یونین، ٹاؤن، کمیٹی یا کونسل میں خواتین کے لیے 33 فیصد نشستیں مخصوص کی گئی ہیں جبکہ غیرمسلموں، نوجوانوں اور مزدوریا کسان کے لیے پانچ فیصد نشستیں رکھی گئی ہیں۔

اس عمل میں تاخیر کے ضمن میں الیکشن کمیشن کا مؤقف یہ رہا ہے کہ بلدیاتی انتخابات کے دوران جن نشستوں پر انتخاب ہونا رہ گیا تھا پہلے وہاں انتخابات کروا کر ایوان مکمل کیا جائے جس کے بعد ہی مخصوص نشستوں پر انتخابات کا عمل شروع ہوسکےگا۔

الیکشن کمیشن سندھ کے مطابق بلدیاتی انتخابات ایک مشکل اور دقیق مرحلہ ہے اور اس میں نتائج کا تیاری اور مخصوص نشستوں کے انتخابات کے حساب میں بھی وقت درکار ہوتا ہے۔

تاہم الیکشن کمیشن کے سابق سیکریٹری کنور محمد دلشاد اس سے متفق نہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ سنہ 2001 اور 2005 میں بھی بلدیاتی انتخاب ہوئے تھے مگر ایک ہفتے میں ہی عمل مکمل کردیا گیا تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

انھوں نے کہا کہ اس عمل میں تاخیر کی وجہ سے شکوک و شبہات پیدا ہوئے ہیں اور ایم کیو ایم سمیت کچھ سیاسی جماعتوں نے اس پر اعتراض کیا ہے جس سے الیکشن کمیشن کی ساکھ متاثرہوسکتی ہے اور غیر جانبداری پر بھی حرف آتا ہے۔

انھوں نے کہا کہ ضمنی انتخابات بعد میں بھی کروائے جاسکتے تھے جس سے کوئی مشکل پیش نہیں آتی۔

سندھ اور پنجاب کی جانب سے مقامی حکومتوں کے قانون پر بھی کنور دلشاد نے کڑی نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ اس میں کسی قسم کے اوقاتِ کار واضع نہیں ہیں کہ کونسا عمل کب اور کتنی دیر میں مکمل کیا جائے گا۔

انھوں نے مزید بتایا کہ اسلام آباد میں تو مخصوص نشستوں پر 16 جنوری کو انتخابات ہورہے ہیں تو پنجاب میں کونسی قباحت ہے کہ وہاں اتنی دیر لگ رہی ہے۔

دوسری جانب سندھ الیکشن کمیشن کے ایک اہلکار نے بی بی سی کو بتایا کہ بار بار سندھ حکومت کی جانب سے قانون میں تبدیلی اور مخصوص نشستوں کی تعداد پر فیصلہ نہ ہونا بھی تاخیر کا سبب بنا۔

اسی بارے میں