شرمین چنائے نواز شریف کے بیان سے خوش

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

آسکر ایوراڈ حاصل کرنے والی پاکستان کی پہلی فلم ہدایتکارہ شرمین عبید چنائے نے غیرت کے نام پر قتل کے مسئلے سے نمٹنے کے عزم کا اظہار کرنے پر وزیرِ اعظم نواز شریف کا شکریہ ادا کیا ہے۔

گذشتہ ہفتے ہدایتکارہ شرمین عبید چنائے کی دستاویزی فلم ’اےگرل ان دا ریور‘ کو آسکر ایوارڈز کی حتمی نامزدگیوں کی فہرست میں شامل کر لیاگیا۔

جمعے کو سوئیٹزر لینڈ کے شہر ڈیووس میں ایک تقریب کے دوران شرمین عبید چنائے نے وزیراعظم نواز شریف کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ’ میں فقط آپ کی جانب سے حال ہی میں دیے جانے والے اس بیان پر آپ کا شکریہ ادا کرنا چاہتی ہوں، جس میں آپ نے کہا تھا کہ آپ پاکستان میں غیرت کے نام پر قتل کے خلاف کام کریں گے۔‘

ان کا کہا تھا کہ میرے لیے یہ اعزاز ہے میرے ایسے وزیراعظم ہیں جو اس مسئلے پر کا م کر رہے ہیں۔

خیال رہے کہ وزیرِ اعظم نے اپنے پیغام میں کہا تھا کہ’اس فلم کا موضوع بہت اہم ہے، حکومت کا عزم ہے کہ وہ غیرت کے نام پر قتل جیسے سنگین جرائم کے خاتمے کے لیے مؤثر قانون سازی کرے اور شرمین عبید چنائے کی دستاویزی فلم اس ضمن میں بہت مددگار ہوگی۔‘

انھوں نے مزید کہا کہ اس فلم کی پاکستان میں نمائش وزیرِ اعظم ہاؤس سے شروع کیے جانے کی توقع ہے۔

شرمین عبید نے سنہ 2012 میں اپنی فلم ’دی سیونگ فیس‘ کے لیے آسکر ایوارڈ جیتا تھا۔ اس فلم کو قلیل دورانیے کی دستاویزی فلموں کے زمرے میں نامزد کیا گیا تھا۔

شرمین عبید کو اس سے پہلے ایمی ایوارڈ سے بھی نوازا گیا ہے۔

شرمین عبید اس سے پہلے ’پاکستانز طالبان جنریشن‘ اور ’عراق: دی لوسٹ جنریشن‘ جیسی عالمی شہرت یافتہ فلموں کی ہدایتکاری بھی کر چکی ہیں۔

شر مین عبید ان 11 خواتین ہدایتکاروں میں سے ایک ہیں جنھوں نے نان فکشن کے شعبے میں آسکر ایوارڈ حاصل کر رکھا ہے۔

اسی بارے میں