گوجرانوالہ میں چار شدت پسندوں کی ہلاکت کا دعویٰ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

پاکستان کے صوبہ پنجاب کی کاؤنٹر ٹیررازم پولیس (سی ٹی ڈی) نے گوجرانوالہ میں چار شدت پسندوں کی ہلاکت کا دعویٰ کیا ہے۔

سی ٹی ڈی پولیس پنجاب کے ترجمان کے مطابق یہ مقابلہ گوجرانوالہ کے علاقے ایمن آباد میں منگل اور بدھ کی درمیانی شب ہوا جس میں تین دیگر شدت پسند فرار ہوگئے۔

لاہور سے صحافی عبدالناصر نے بتایا کہ ترجمان کے مطابق سی ٹی ڈی گوجرانوالہ کے ڈسٹرکٹ آفیسر کو ایک خفیہ اطلاع ملی تھی کہ سات شدت پسند سیالکوٹ سے لاہور جارہے ہیں جس پر سی ٹی ڈی پولیس نے ایمن آباد میں ناکہ لگا کر ایک مشتبہ گاڑی اور موٹر سائیکل کو روکا۔

روکے جانے پر گاڑی اور موٹر سائیکل پر سوار افراد نے پولیس پارٹی پر فائرنگ کردی۔ پولیس کی جوابی فائرنگ میں چار شدت پسند ہلاک ہوگئے جبکہ تین فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔

سی ٹی ڈی ترجمان کا کہنا ہے کہ مارے گئے شدت پسندوں میں ایک کی عبدالرحمان کے نام سے شناخت ہوئی ہے جو گوجرانوالہ کا رہائشی ہے اور اس کا تعلق القاعدہ سے ہے ۔ عبدالرحمان دہشت گردی اور قتل کے آٹھ مقدمات میں پولیس کو مطلوب تھا۔

ترجمان کے مطابق مارے گئے دہشت گردوں کے قبضے سے السحہ برآمد ہوا ہے۔

اسی بارے میں