مردان: سیاسی کارکنوں میں جھڑپ میں چار افراد ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption ایسی خبریں گردش کر رہی ہیں کہ تیراہ میں سکیورٹی فورسز اور شدت پسندوں کے درمیان جھڑپ ہوئی ہے

پاکستان کے قبائلی علاقے خیبر ایجنسی میں وادی تیراہ کے دورافتادہ گاؤں سے چار افراد کی لاشیں ملی ہیں جن کی شناخت اب نہیں ہو سکی جبکہ خیبر پختونخوا کے ضلع مردان میں دو سیاسی جماعتوں کے کارکنوں میں جھڑپ میں چار افراد ہلاک اور سات زخمی ہوئے ہیں

وادی تیراہ سے ملنی والی لاشوں کے بارے میں ایسی اطلاعات ہیں کہ چاروں افراد سکیورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپ میں ہلاک ہوئے ہیں۔

یہ لاشیں جمعرات کو وادئ تیراہ میں مستک کے علاقے سے ملی ہیں ۔ یہ علاقہ خیبر ایجنسی کا ایک دورافتادہ گاؤں ہے جہاں مواصلات کا کوئی باقاعدہ انتظام نہیں ہے ۔

سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ لاشوں کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں ان کی شناخت کی جا رہی ہے۔ ایسی اطلاعات ہیں کہ دو افراد کو تعلق خیبر ایجنسی سے ہی ہے۔

یہاں ایسی خبریں گردش کر رہی ہیں کہ تیراہ میں سیکیورٹی فورسز اور شدت پسندوں کے درمیان جھڑپ ہوئی ہے جس میں چار افراد ہلاک ہوئے ہیں ۔ اس بارے میں آزاد زرائع کا کہنا ہے کہ انھیں کسی جھڑپ کی اطلاع نہیں ہے تاہم یہ ضرور ہے کہ چار لاشیں مستک کے علاقے سے ملی ہیں۔

Image caption سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ لاشوں کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے

چند روز پہلے قبائلی علاقے مہمند ایجنسی میں بھی اسی طرح کی صورتحال پیدا ہو گئی تھی جب تحصیل خویزئی سے چار افراد کی لاشیں ملی تھیں۔

ادھر خیبر پختونخوا کے ضلع مردان میں دو سیاسی جماعتوں کے کارکنوں میں جھڑپ میں چار افراد ہلاک اور سات زخمی ہوئے ہیں۔ پولیس حکام کے مطابق یہ جھڑپ پاکستان تحریک انصاف اور عوامی نیشنل پارٹی کے کے کارکنوں کے درمیان ہوئی ہے۔

پارٹی جھنڈے کے تنازعے پر پشاور اور مردان میں چار سیاسی جماعتوں کے درمیان جھڑپوں میں سات افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

ایسی اطلاعات موصول ہوئی ہیں کہ مردان کے علاقے ہوتی میں پاکستان تحریک انصاف کی ریلی پر فائرنگ ہوئی ہے جس میں پی ٹی آئی کے ایک کونسلر سمیت چار افراد ہلاک ہوئے ہیں۔ یہ واقعہ جمعہ کے روز شام کے وقت پیش آیا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption پولیس کے مطابق علاقے میں کشیدگی پائی جاتی ہے

مردان کے ضلعی پولیس افسر فیصل شہزاد نے بی بی سی کو بتایا کہ یہ جھڑپ پارٹی کے جھنڈے پر ہوئی ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کی ریلی عوامی نیشنل پارٹی کے ایک عہدیدار کی رہائش گاہ کے سامنے سے گزر رہی تھی جہاں پہلے دونوں جانب سے تلخ جملوں کا تبادلہ ہوا اور پھر اس کے بعد فائرنگ ہوئی ہے۔

انھوں نے کہا کہ اس جھڑپ میں چار افراد ہلاک ہوئے ہیں جن میں ایک پی ٹی آئی کے کونسلر ہیں جبکہ باقی تین میں زیادہ کا تعلق اے این پی سے بتایا گیا ہے۔ جبکہ زخمیوں میں زیادہ تر عوامی نیشنل پارٹی کے کارکن ہیں ۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ ابتدائی اطلاعات ہیں اور اس واقعے کی چھان بین کے لیے مذید تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

پولیس کے مطابق زخمیوں کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے اور اس وقت علاقے میں کشیدگی پائی جاتی ہے۔

اسی بارے میں