’دہشت گردوں کے خلاف کامیابی میں نوجوانوں کا اہم کردار‘

تصویر کے کاپی رائٹ APP
Image caption ’ملک میں پائیدار امن کے لیے یہ سفر (آپریشن) پورے ملک میں پختہ غزم کے ساتھ جاری رہے گا‘

پاکستان کی فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں کے خلاف جاری آپریشن میں کامیابی کے لیے نوجوان نسل کو اہم کردار ادا کرنا ہو گا۔

اتوار کو شیندور کے مقام پر پولو فیسٹول کے اختتام پر جنرل راحیل شریف نے اپنے خطاب میں کہا کہ اس تاریخی فیسٹول کے انعقاد سے دہشت گردوں کو یہ پیغام جاتا ہے کہ پاکستان بلا خوف و خطر اپنی روایات کو جاری رکھے گا۔

٭ جشنِ شندور کا گیت

یاد رہے کہ چترال کے قریب واقع شندور کی وادی میں سالانہ جشنِ شندور 28 سے 31 جولائی تک جاری رہا۔ جس میں گلگت اور چترال کی پولو ٹیموں کے درمیان میچ ہوئے۔

شیندور میں پولو سنہ 1936 سے کھیلی جاری ہے اور یہ پولو گروانڈ سطحِ سمندر سے ساڑھے بارہ ہزار فٹ کی بلندی پر واقع ہے۔ اس پولو گروانڈ کا شمار دنیا کے بلند ترین پولو گروانڈ میں ہوتا ہے۔

شیندور فیسٹول کے اختتامی تقریب میں شرکت کے دوران فوج کے سربراہ نے کہا کہ ملک میں امن و امان کے لیے پاکستان کی عوام اور افواج نے بے شمار قربانیاں دی ہیں اور ’آپریشن ضربِ عضب اسی جذبے اور پختہ یقین کا تسلسل ہے۔‘

فوج کے سربراہ نے کہا کہ ’ملک میں پائیدار امن کے لیے یہ سفر (آپریشن) پورے ملک میں پختہ غزم کے ساتھ جاری رہے گا۔ اس سفر میں کامیابی کا دارومدار قوم کے مکمل حمایت اور نوجوانوں نسل کے کلیدی کردار پر منحصر ہے۔‘

آرمی چیف نے دہشت گردوں کو تنبیہ کی کہ ’دہشت گردوں اور اُن کے مددگاروں کے لیے زمین تنگ ہو چکی ہے اور جلد پاکستان دنیا میں امن و سلامتی کی پہچان بنے گا۔‘

راحیل شریف نے کہا کہ چترال اور گلکت بلتستان کے عوام کو مشکلات کا سامنے اور یہ علاقے دور دراز ہونے کے ساتھ زمینی آفات کا بھی شکار ہوئے ہیں۔

یاد رہے کہ گذشتہ ماہ چترال میں شدید بارشوں کے بعد آنے والے سیلاب سے سینکڑوں مکانات کو نقصان پہنچا تھا اور تقریباً 50 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

سیلاب میں پھنسے افراد کو نکالنے اور راستوں کو بحال کرنے میں فوج کے جوانوں اور تعمیراتی ادارے ایف ڈبلیو او نے اہم کردار ادا کیا تھا۔

اسی بارے میں