سندھ میں بارشوں کے دوران حادثات، کم از کم 16 ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption محکمہ موسمیات نے آئندہ 24 گھنٹوں میں زیریں سندھ اور ملک کے بالائی علاقوں میں مزید بارشوں کا امکان ظاہر کیا ہے

پاکستان کے سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق کراچی سمیت صوبہ سندھ کے مختلف شہروں میں بارش کے دوران پیش آنے والے مختلف حادثات میں کم از کم 16 افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

اتوار کو بارش کے بعد صوبائی دارالحکومت کراچی کے مختلف علاقوں میں نظام زندگی بری طرح متاثر ہوا ہے۔

٭ ہر برس مون سون، ہر برس پانی کے تالاب

ریڈیو پاکستان کے مطابق کراچی میں بارش کے دوران مختلف حادثات میں کم از کم 11 افراد کی ہلاکت ہوئی۔

ریسکیو ذرائع کے مطابق آٹھ افراد کی ہلاکت کرنٹ لگنے اور تین افراد چھتیں گرنے سے ہوئی۔

سندھ کے دیگر شہروں حیدرآباد، میرپورخاص، بدین، سکھر اور خیر پور میں گذشتہ 24 گھنٹوں میں کم از کم پانچ افراد کی ہلاکت کی اطلاعات ہیں۔

تین افراد کی ہلاکت ضلع بدین کے مختلف علاقوں میں ہوئی جبکہ حیدر آباد اور ٹنڈو محمد خان میں ایک ایک ہلاکت کی اطلاع ہے۔

سرکاری ذرائع کے مطابق حیدرآباد، خیرپور، میرپورخاص، کوٹ غلام محمد اور دیگر اضلاع میں تیز بارشوں سے نظام زندگی متاثر ہوا ہے۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کراچی میں بارش کے بعد کے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا اور حالات کا جائزہ لیا۔

اس موقع پر انھوں نے متعلقہ محمکوں کو نشیبی علاقوں سے پانی کی نکاسی کو جلد از جلد ممکن بنانے کی ہدایات جاری کیں۔

ادھر بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ سے بی بی سی کے نامہ نگار محمد کاظم نے بتایا کہ ضلع ہرنائی میں سیلابی ریلے میں تین افراد ہلاک ہوگئے۔

ہرنائی میں انتظامیہ کے ذرائع کے مطابق لوگوں کی ایک بڑی تعداد کوئٹہ اور دیگر علاقوں سے ضلع میں زردآلو کے علاقے سپلیزہ تنگی میں پکنک منانے آئی تھی۔

پاکستان کے محکمہ موسمیات نے آئندہ 24 گھنٹوں میں زیریں سندھ اور ملک کے بالائی علاقوں میں مزید بارشوں کا امکان ظاہر کیا ہے۔

اسی بارے میں