کوئٹہ میں فرنٹیئر کور پر حملے میں ایک اہلکار ہلاک

Image caption ایف سی کے اہلکار سریاب کے علاقے میں ریلوے ٹریک پر گشت میں مصروف پر تھے

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں ایک حملے میں فرنٹیئر کور کا ایک اہلکار ہلاک اور ایک زخمی ہوا ہے۔

سرکاری حکام کا کہنا ہے کہ جوابی کاروائی میں ایک مبینہ حملہ آور بھی مارا گیا۔

کوئٹہ میں فرنٹیئر کور کے ترجمان کے مطابق ایف سی کے اہلکار سریاب کے علاقے میں ریلوے ٹریک پر گشت میں مصروف تھے کہ مسلح افراد نے ان پر حملہ کردیا۔

اس حملے کے نتیجے میں ایف سی کا ایک اہلکار ہلاک اور ایک زخمی ہوا جبکہ جوابی فائرنگ سے ایک حملہ آور بھی مارا گیا۔

ایف سی اہلکاروں کی فائرنگ سے ہلاک ہونے والے مبینہ حملہ آور کی لاش کو شناخت کے لیے سول ہسپتال کوئٹہ منتقل کردیا گیا۔

دوسری جانب گذشتہ روز ضلع گوادر کے علاقے جیونی میں لیویز فورس کے اہلکاروں پر حملے کی ذمہ داری کالعدم عسکریت پسند تنظیم بلوچ ریپبلیکن آرمی نے قبول کی ہے۔

اس حملے میں ایک تحصیلدار اور لیویز فورس کے پانچ اہلکار ہلاک ہوئے تھے۔

ایک اور کالعدم عسکریت پسند تنظیم بلوچ ریپبلیکن گارڈز نے سبی کے مختلف علاقوں میں سیکورٹی فورسز پر حملوں کی ذمہ داری قبول کی ہے تاہم سرکاری سطح پر اس کی تصدیق نہیں ہوئی۔

اسی بارے میں