پاکستان اور انڈیا کے درمیان ثالث کا کردار ادا کرنے کو تیار ہیں: ایران

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption جواد ظریف ہارٹ آف ایشیا کانفرنس میں شریک ہونے کے لیے انڈیا میں موجود ہیں

ایران نے مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے پاکستان اور انڈیا کے درمیان ثالث کا کردار ادا کرنے کی پیشکش کی ہے۔

پاکستان کے سرکاری ریڈیو کے مطابق ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’اگر دونوں ملک آمادہ ہوں تو ایران اس دیرینہ تنازعے میں ثالثی کے لیے تیار ہے۔‘

جواد ظریف نے کہا کہ ایران کے پاکستان اور انڈیا کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں۔

ایران کی جانب سے پاکستان اورانڈیا کے درمیان ثالث کا کردار ادا کرنے کی یہ پیش کش ایک ایسے وقت میں آئی ہے جب پاکستان کی جانب سے وزیراعظم کے خارجہ امور کے مشیر سرتاج عزیز ہارٹ آف ایشیا کانفرنس میں شرکت کے لیے انڈیا میں موجود ہیں۔

جواد ظریف نے مزید کہا کہ ’ہم دونوں ممالک کے ساتھ تعلقات کو کھونا نہیں چاہتے ہیں یہ تعلق ہمارے لیے بہت اہم ہے اور ہم دونوں ممالک کے لیے اچھے کی امید رکھتے ہیں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ اگر ایران ان دونوں ممالک کے کام آسکتا ہے تو وہ اس کے لیے تیار ہیں۔

خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کے مطابق ایرانی وزیر خارجہ نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ’تینوں ممالک مستقبل کے لیے بین الاقوامی جمہوری نظام کے مشترکہ خیالات رکھتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ’ہم امید اپنے بہترین دوست پاکستان اور انڈیا کے درمیان بہتر تعلقات کی امید رکھتے ہیں۔‘

دوسری جانب سرتاج عزیز افغانستان سے متعلق ہونے والی ہارٹ آف ایشیا کانفرنس میں پاکستانی وفد کی قیادت کررہے ہیں جس میں تقریباً 40 ممالک کے وزرائے خارجہ اور 14 ملکوں کے نمائندے شرکت کریں گے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں