محمد کیف کے ’سوریا نمسکار‘ پر ہنگامہ

کیف تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption محمد کیف کا شاید اس ردعمل کی توقع نہیں تھی

انڈیا میں سابق کرکٹر محمد کیف کے 'سوریا نمسکار' نامی جسمانی ورزش کرنے پر بہت سے لوگ ان پر تنقید کر رہے ہیں۔

محمد کیف نے 30 دسمبر کو 'سوریا نمسکار' کی اپنی تصویر ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا تھا کہ 'جسمانی ساخت کے لیے سوریا سنسکار ایک کامل مشق ہے، جن میں کسی آلے کی ضرورت نہیں پڑتی۔'

خیال رہے کہ سوریا نمسکار ایک جسمانی ورزش ہے اور یہ یوگا کا حصہ ہے۔ سوریا نمسکار سنسکرت کی اصطلاح ہے اور اردو میں اس کا مطلب ’سورج کو سلام‘ ہے۔

محمد کیف کی یہ ٹویٹ انڈیا میں بہت سارے لوگوں کو ناگوار گزری اور انھوں نے اس کا اظہار بھی کیا۔

پٹیل محمد نے محمد کیف کو ٹویٹ کیا کہ 'سوریا نمسکار اسلام میں 100 فیصد منع ہے۔ ہم اللہ کے سوا کسی کے آگے نہیں جھکتے ہیں۔'

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter

افتخار کاظمی نے لکھا کہ "سوریا نمسکار ہماری ثقافت، سماج اور روایات سے برعکس ہے۔ آپ یہ سب کیوں پوسٹ کر رہے ہیں۔'

محمد کیف کا شاید اس ردعمل کی توقع نہیں تھی جس کے بعد انھوں نے ایک اور ٹویٹ میں اپنا موقف پیش کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter
تصویر کے کاپی رائٹ Twitter

محمد کیف نے چار تصاویر کے ساتھ ٹویٹ کیا کہ 'ان چاروں تصاویر میں میرے دل میں اللہ تھا۔ میں یہ بات سمجھ نہیں پا رہا ہوں کہ سوریا نمسکار یا جم کا مذہب سے کیا تعلق ہے۔ یہ سب کے لیے فائدہ مند ہے۔'

محمد کیف کے اس ٹویٹ پر کچھ لوگوں نے اپنی حمایت کا بھی اظہار کیا۔

توقیر حافظ نے لکھا کہ 'سب نیت کی بات ہے۔ ایسے لوگوں کو نظر انداز کیجیے۔ مذہب ہمیشہ آپ کے اور اللہ کے درمیان رہے گا۔'

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter

اسی بارے میں