’کیا ہم بھی اگلے سال کھوپڑیوں کے ساتھ آئیں؟‘
اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’کیا ہم بھی اگلے سال کھوپڑیوں کے ساتھ آئیں؟‘

انڈیا کے دارالحکومت دہلی میں گذشتہ نو دنوں سے کسان اپنے دیرینہ مطالبات منوانے کے لیے ان کاشتکاروں کی کھوپڑیوں کے ساتھ احتجاج کر رہے ہیں جو خود کشی کر چکے ہیں۔ ان کسانوں کا تعلق جنوبی ریاست تمل ناڈو سے ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ریاست میں شدید خشک سالی کے سبب کاشتکار پریشان ہیں لیکن سرکاری بینک قرضہ واپس کرنے کے لیے انھیں ہراساں کر رہے ہیں اور اگر یہی حال رہا تو بہت سے کسان بھی خود کشی کرنے پر مجبور ہوں گے۔ کسان چاہتے ہیں کہ قومی بینک ان کے قرضے معاف کریں، ان کی فصلوں کا بہتر معاوضہ دیا جائے اور آب پاشی کے لیے دریائے کاویری میں پانی مہیا کیا جائے۔ دہلی میں ہمارے ساتھی صلاح الدین نے ان سے بات چیت کی۔