شمالی کوریا کے جوہری حملے سے متعلق عزائم پر چین کو تشویش

چین تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption چین کے وزاتِ خارجہ کے ترجمان لُو کانگ کا کہنا تھا کہ چین ایسے تمام الفاظ اور اقدامات کی مخالفت کرتا ہے جن سے کشیدگی میں اضافہ ہو

چین نے شمالی کوریا کی جوہری ترقی اور عزائم کے حوالے سے شدید خدشات کا اظہار کیا ہے۔

چین کی جانب سے یہ بات شمالی کوریا کے ایک اعلیٰ عہدیدار کے بی بی سی کو دیے گئے انٹرویو کے تناظر میں کہی گئی ہے۔

شمالی کوریا کے نائب وزیر خارجہ نے بی بی سی کو بتایا تھا کہ پیانگ یانگ میزائلوں کے تجربے جاری رکھے گا اور اگر اسے لگا کہ امریکہ حملے کی منصوبہ بندی کر رہا ہے تو وہ جوہری حملے میں پہل کر دے گا۔

* ’شمالی کوریا ہتھیاروں کی طاقت سے اپنا دفاع کرے گا‘

* شمالی کوریا کے پاس کیا کچھ ہے

* کسی بھی وقت لڑائی چھڑ سکتی ہے: چین

چین کے وزاتِ خارجہ کے ترجمان لُو کانگ کا کہنا تھا کہ چین ایسے تمام الفاظ اور اقدامات کی مخالفت کرتا ہے جن سے کشیدگی میں اضافہ ہو۔

حالیہ دنوں میں امریکہ اور شمالی کوریا میں کشیدگی بڑھی ہے۔

امریکہ کے نائب صدر مائیک پینس نے علاقے کے دورے کے دوران متنبہ کیا تھا کہ شمالی کوریا واشنگٹن کو نہ آزمائے اور کہا تھا کہ ’شمالی کوریا کے لیے امریکہ کا سٹرٹیجک برداشت کا دور ختم ہو چکا ہے۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption شمالی کوریا نے اتوار کو ایک میزائل تجربے کے علاوہ طاقت کا مظاہرہ کرنے کے لیے فوجی پریڈ بھی کی

بیجنگ میں بی بی سی کے نامہ نگار سٹیفن میکڈونل کا کہنا تھا بظاہر ایسا محسوس ہو رہا ہے کہ چین اپنے روایتی حلیف شمالی کوریا کے رویے سے کافی جھنجھلایا ہوا ہے۔

بی بی سی کے انٹرویو کا حوالہ دیتے ہوئے چینی وزاتِ خارجہ کے ترجمان لُو کانگ کا کہنا تھا ’میں نے حالیہ رپورٹس دیکھی ہیں۔ چین کو شمالی کوریا کے جوہری اور میزائل پروگرام کی ترقی سے متعلق حالیہ رجحانات پر کافی تشویش ہے۔‘

ان کا مزید کہنا تھا ’چین جزیرہ نما کوریا کو جوہری ہتھیاروں سے پاک کرنے، امن اور استحکام کے قیام کے اپنے عہد پر قائم ہے۔ وہ چاہتا ہے کہ معاملات بات چیت اور مذاکرات سے حل کیے جائیں۔‘

لُو کانگ کا کہنا تھا کہ پیانگ یانگ کے اس تازہ بیان سے پہلے ہی خطے میں حالات کشیدہ تھے۔

خیال رہے کہ شمالی کوریا نے اتوار کو ایک میزائل تجربے کے علاوہ طاقت کا مظاہرہ کرنے کے لیے فوجی پریڈ بھی کی تھی۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں