کشمیر: فوجی کیمپ پر حملہ،ایک افسر سمیت تین فوجی اہلکار ہلاک

بھارتی فوج تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption حملے میں پانچ فوجی شدید طور پر زخمی بھی ہوئے ہیں

انڈیا کے زیر انتظام کشمیر ميں فوجی ترجمان کے مطابق لائن آف کنٹرول کے قریب ضلع کپوارہ میں پنزگام فوجی کیمپ پر علی الصبح مسلح شدت پسندوں نے 'خودکش' حملہ کیا جس میں ایک افسر سمیت تین فوجی اہلکار ہلاک ہو گئے۔

جمعرات کو ہونے والے اس حملے میں فوجی ترجمان کرنل راجیش کالیا کے مطابق جوابی کارروائی میں دو حملہ آور بھی مارے گئے۔

اطلاعات کے مطابق حملے میں پانچ فوجی شدید طور پر زخمی بھی ہوئے ہیں۔

’کشمیر انڈیا کے ہاتھوں سے نکل رہا ہے؟‘

انڈیا کے زیرِ انتظام کشمیر میں فوجی کیمپ پر حملہ

فوج نے یہ واضح نہیں کیا ہے کہ حملہ آوروں کی تعداد کتنی تھی۔ تاہم فوج اور پولیس کا کہنا ہے کہ علاقے میں سرچ آپریشن شروع کر دیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ یہ حملہ سرینگر میں 24 اپریل کو منعقدہ ایک اعلیٰ سطحی فوجی اجلاس کے صرف دو روز بعد ہوا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ ABID BHAT

اس اجلاس کی صدارت وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نے کی تھی اور اجلاس کے دوران کشمیر میں تعینات فوج کی کئی کورز کے کمانڈروں نے لائن آف کنٹرول پر سکیورٹی بڑھانے کے حوالے سے تفصیلات دی تھیں۔

غور طلب بات یہ ہے کہ نو اپریل کو کشمیر میں پارلیمنٹ کی ایک نشست کے لیے ہونے والے ضمنی انتخابات کے دوران وادی بھر میں احتجاجی لہر پھیل گئی تھی اور مظاہرین کے خلاف فورسز اور پولیس کی کارروائیوں میں اب تک دس افراد مارے گئے ہیں۔

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں
کشمیر میں سوشل میڈیا پر پابندی اور مظاہرے

انتخابات کی شرح سات فیصد رہی، لیکن مظاہروں کا سلسلہ ابھی تک نہیں رک سکا ہے۔ اب تو سکولوں اورکالجوں کے طلباء و طالبات نے ہمہ گیر تحریک شروع کردی ہے جس کی وجہ سے حکام نے تعلیمی اداروں میں چھٹی کا اعلان کیا ہے۔

گذشتہ برس بھی جولائی میں نوجوان عسکریت پسند رہنما برہان وانی کی تصادم میں ہلاکت کے بعد ایسی ہی تحریک چلی تھی جو کئی ماہ تک جاری رہی لیکن ستمبر میں اُڑی کیمپ پر مسلح حملے میں 19فوجیوں کی ہلاکت کے بعد صورتحال تبدیل ہوگئی تھی۔

جمعرات کو کپوارہ کیمپ پر ہونے والے حملے کی ذمہ داری ابھی تک کسی مسلح گروپ نے قبول نہیں کی ہے اور فوج یا پولیس نے بھی ابھی تک واضح نہیں کیا ہے کہ حملہ مقامی شدت پسندوں نے کیا ہے یا کہیں اور سے آئے تھے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں