کشمیر میں پولیس اہلکار سمیت چار افراد ہلاک

انڈین فوجی تصویر کے کاپی رائٹ AFP/Getty Images
Image caption جنوبی کشمیر میں شدت پسندوں کے خلاف کئی دنوں سے آپریشن جاری ہے

انڈیا کے زیر انتظام کشمیر کے کولگام ضلع کے ميربازار میں سنیچر اور اتوار کی درمیانی شب ہونے والی فائرنگ کے نتیجے میں ایک پولیس اہلکار اور ایک شدت پسند سمیت چار افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔

دارالحکومت سری نگر سے تقریبا 60 کلومیٹر دور کولگام کے ميربازار علاقے میں پولیس فورسز پر اس وقت فائرنگ ہوئی جب پولیس سرینگر، جموں قومی شاہراہ پر ہونے والے ایک حادثے کے بعد ٹریفک جام کو ہٹانے میں مصروف تھی۔ اس حادثے میں ایک شخص ہلاک ہو گیا تھا۔

کشمیر:فوجی کیمپ پر حملے میں تین انڈین فوجی ہلاک

کشمیر: فوج اور پولیس کی مظاہرین پر فائرنگ، دو ہلاک

پولیس کا کہنا ہے کہ جس وقت مير بازار میں پولیس فورس ٹریفک جام ہٹا رہی تھی اسی دوران کار میں سوار شدت پسندوں نے پولیس پر فائرنگ کر دی جس میں پولیس کا ایک جوان ہلاک ہو گیا۔

ایک پولیس افسر نے بی بی سی کو بتایا کہ اس حملے میں ایک پولیس اہلکار، ایک شدت پسند اور دو شہری ہلاک ہو گئے تاہم ہلاک ہونے والے افراد کی ابھی شناخت نہیں ہو سکی۔

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption کشمیر میں ایک عرصے سے انڈیا مخالف احتجاج اور مظاہرے جاری ہیں

پولیس نے مارے جانے والے شدت پسند سے ہتھیار برآمد کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

پولیس نے علاقے میں بچ کر نکل جانے والے دو شدت پسندوں کی تلاش شروع کر دی ہے۔

کولگام ضلع میں گذشتہ دنوں ایک شدت پسند حملے میں پانچ پولیس اہلکاروں اور دو بینک ملازمین ہلاک ہو گئے تھے۔

گذشتہ ایک ماہ میں جنوبی کشمیر میں شدت پسند حملوں میں تیزی آئی ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں