’ہماری عورتوں کے دوپٹوں سے ہمیں باندھ دیا‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption انڈیا میں ریپ کے خلاف احتجاج کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

انڈیا کے دارالحکومت دلی کے قریب مسلح افراد نے گاڑی سے سفر کرنے والے ایک خاندان کی چار خواتین کو مبینہ طور پر گینگ ریپ کا نشانہ بنایا، اور خاندان کے ایک فرد کو گولی مار کر ہلاک کر دیا ہے۔

انڈین خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی کے مطابق بدھ کی رات کو ایک خاندان کی گاڑی کو چند افراد نے زبردستی روکا اور ان کے ساتھ لوٹ مار کی۔ مزاحمت کرنے پر ان افراد نے خاندان کے سربراہ شکیل کو گولی مار کر ہلاک کر دیا جبکہ خاندان کی چار خواتین کا ریپ کیا۔

یہ واقعہ دلی سے متصل مغربی اتر پردیش کے علاقے جھیور کے سبوتا گاؤں کے قریب پیش آیا۔

شکیل کے بہنوئی شفیق نے پولیس میں قتل، گینگ ریپ اور راہ زنی کا مقدمہ درج کروایا ہے۔

گاڑی میں سوار ایک شخص، آزاد قریشی نے بتایا کہ ’ہم گاڑی میں چلے تو محسوس ہوا کہ پہیوں کے نیچے کسی نے کچھ ڈالا ہے۔ تھوڑا آگے چلے تو دونوں گاڑیوں کے ٹائر پنکچر ہو گئے۔ ہم گاڑی سے نیچے اترے تو پانچ افراد آ گئے اور پانچوں ہی کے ہاتھوں میں ہتھیار تھے۔ انہوں نے ہم سے پیسے چھیننا شروع کر دیے اور ہمیں سڑک سے اتنی دور لے گئے کہ اگر کوئی دیکھے تو نظر نہ آ سکے۔‘

انہوں نے مزید کہا کہ ’وہاں جا کر ہماری عورتوں کے دوپٹے لے کر ہمیں باندھ دیا۔ جب ہماری لیڈیز سے زیادہ بدتمیزی کر رہے تھے تو ہمارے چاچا، جن کے گولی لگی ہے، یہ کہہ رہے تھے کہ آپ نے ہمارا سب کچھ لوٹ لیا۔۔۔ ہمیں جانے دو۔ وہ بولے ہم تمہیں جانے نہیں دیں گے، ماریں گے۔ ایک ایک کر کے وہ لیڈیز کو وہاں سے لے جاتے تھے۔‘

خبروں کے مطابق اس واقعے کی اطلاع ملنے پر سینئر پولیس افسران موقع پر پہنچ گئے۔ محکمہ پولیس کا کہنا ہے کہ اس معاملے کی تحقیقات کی جارہی ہیں۔

انڈیا میں ریپ کے بڑھتے واقعات

مردوں کے حقوق کے لیے لڑنے والی خاتون

’سارے مرد ایک جیسے نہیں ہوتے؟‘

پی ٹی آئی نے سینئر پولیس افسر لو کمار کے حوالے سے کہا ہے کہ اس واقعے میں ہلاک ہونے والے شکیل کا تعلق جھیور سے تھا۔

اطلاعات کے مطابق اس خاندان کے ایک رشتہ دار بلند شہر کے ایک ہسپتال میں داخل تھے۔ طبیعت بگڑنے پر یہ لوگ منگل کی رات تقریباً دو بجے گاڑی میں جھیور سے بلند شہر کے لیے روانہ ہوئے تھے۔

جب یہ لوگ سبوتا گاؤں کے قریب پہنچے تو تقریباً چھ افراد نے ان کی گاڑی کے ٹائر پر گولی مار کر گاڑی کو روک لیا۔

پولیس افسر کمار نے بتایا کہ جیسے ہی گاڑی رکی ان مسلح افراد نے پورے خاندان کو یرغمال بنا لیا۔

ان افراد نے پہلے لوٹ مار کی اور مزاحمت کرنے پر خاندان کے سربراہ کو گولی مار کر ہلاک کر دیا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں