بلوچستان: پنجگور میں ایرانی فائرنگ سے چار پاکستانی ہلاک

pakistan levies تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے ایران سے متصل ضلع پنجگور میں ایرانی فورسز کی مبینہ فائرنگ سے چار افراد ہلاک اور پانچ زخمی ہوئے ہیں۔

پنجگور میں انتظامیہ کے ایک سینیئر افسر نے فون پر بی بی سی کو بتایا کہ یہ واقع ایران کی سرحد کے قریب چیدگی کی علاقے میں پیش آیا۔

سینیئر افسر کا کہنا تھا کہ فائرنگ کا نشانہ بننے والے پاکستانی شہری ہیں۔

سینیئر اہلکار کے مطابق مارے جانے اور زخمی ہونے والے افراد اپنے مال مویشی کے ساتھ اس علاقے سے گزر رہے تھے ۔

ان کا کہنا تھا کہ سرحد پار سے مبینہ طور پر ایرانی فورسز نے ان پر فائرنگ کی۔

فائرنگ کے نتیجے میں ان میں سے چار افراد ہلاک اور پانچ زخمی ہوئے ۔

انہوں نے بتایا کہ ہلاک افراد کی لاشوں کو پوسٹ مارٹم اور زخمی افراد کو علاج کے لیے ہسپتال منتقل کیا گیا۔

سینیئر افسر کے مطابق تمام افراد گولی لگنے سے ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں۔

رابطے میں مشکلات کے باعث اس واقعے کے حوالے سے ایرانی حکام کا موقف معلوم نہیں کیا جاسکا۔

سرکاری حکام کے مطابق پنجگور میں پہلے بھی ایران کی جانب سے فائرنگ کے واقعات میں لوگوں کی ہلاکتیں ہوتی رہی ہیں۔

گزشتہ ماہ پاکستانی حکام نے سرحدی خلاف ورزی کرنے کے الزام میں پنجگور ہی کے علاقے میں ایک ایرانی ڈرون کو بھی مار گرایا تھا۔

بلوچستان میں پانچ اضلاع کی طویل سرحد ایران کے ساتھ لگتی ہے۔

ایران کے ساتھ جو اضلاع سرحد پر واقع ہیں ان میں چاغی، واشک، پنجگور، کیچ اور گوادر بھی شامل ہیں۔

پاکستانی حکام کے مطابق پنجگور کے علاوہ دیگر اضلاع کی حدود میں بھی ایران کی جانب سے فائر کیئے جانے والے گولے گرتے رہے ہیں ۔