پاکستانی لڑکی کا اپنی ہندو سہیلی کے لیے انوکھا تحفہ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

21 سال کی ایک پاکستانی لڑکی جو کچھ کر رہی ہے وہ دوستی اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی ایک خوبصورت مثال ہے۔

پاکستان کے شہر کراچی سے تعلق رکھنے والی یہ لڑکی انڈیا آئی ہوئی ہیں اور کراچی میں رہنے والی اپنی بھارتی دوست کے لیے ایک خاص تحفہ لے کر جا رہی ہے۔

وہ انڈیا کی ریاست مدھیہ پردیش آئی تھیں اور اپنی ہندو دوست کے یہاں سے بطور تحفہ دیوی سرسوتی کی مورتی لے کر جا رہی ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

انھوں نے انڈین خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کو بتایا: 'میں اور میری دوست کراچی میں ایک ہی کمپنی میں کام کرتے ہیں۔ میں نے اس سے پوچھا تھا کہ بھارت سے اس کے لیے کیا تحفہ لے کر آؤں۔ اس نے مجھ سے کسی بھی دیوی کا مجسمہ لانے کو کہا تھا۔ تو میں اس کے لیے دیوی سرسوتی کی مورتی لے جا رہی ہوں۔ میں نے یہ هردا (مدھیہ پردیش) کے ہی ایک مقامی بازار سے خریدا ہے۔'

پاکستان اور انڈيا کی یہ دونوں لڑکیاں نہ صرف آپس میں قریبی دوست ہیں بلکہ ان کے خاندانوں میں بھی دوستانہ تعلقات ہیں۔

پاکستانی لڑکی نے بتایا: 'میں نے سرسوتی کی مورتی کا انتخاب اس لیے کیا کیونکہ مجھے پتہ چلا کہ انڈیا میں سرسوتی دیوی کو علم اور دانش کی دیوی سمجھا جاتا ہے۔ میری دوست کو بھی نئی نئی معلومات جمع کرنے کا شوق ہے۔ مجھے امید ہے کہ اس دیوی سے اس کو فیض حاصل ہوگا۔'

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

ان کا کہنا تھا کہ ان کی ماں بھی پچھلی بار اپنے ساتھ بھگوان گنیش کا مجسمہ لے کر گئیں تھیں اور ان کی سہیلی کو یہ بہت پسند آیا تھا۔

مذکورہ پاکستانی لڑکی کے ماما بھی هردا میں ہی رہتے ہیں۔ جب انھیں پتہ چلا کہ ان کی بھانجی سرسوتی کی مورتی لے کر بھارت آ رہی ہے تو وہ بہت خوش ہوئے۔

انہوں نے بتایا: 'میری بھانجی نے مورتی خریدنے کے لیے مجھے مارکیٹ چلنے کو کہا۔ اس طرح کی چیزیں بھارت اور پاکستان میں فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو فروغ دیں گي۔ مجھے امید ہے کہ دونوں ممالک کے درمیان تعلقات بھی بہتر ہوں گے۔'

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں