تہلکہ کے مدیر کے خلاف ریپ کی چارج شیٹ عائد

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ترون تیج پال کو اپنی ساتھی صحافی پر جنسی حملے کے الزام میں 30 نومبر 2013 کو گرفتار کیا گیا تھا

گووا پولیس نے بھارت میں جریدے تہلکہ کے سابق ایڈیٹر ترون تیج پال کے خلاف جنسی حملے کے الزام میں چارج شیٹ داخل کر دی ہے۔

ترون تیج پال اپنے ہی ادارے کی ایک خاتون صحافی سے جنسی بدسلوکی کے الزام میں عدالتی حراست میں ہیں۔

گووا پولیس کے ایڈیشنل ڈی آئی جی او پی مشرا نے بی بی سی کو بتایا: ’گووا پولیس نے ترون تیج پال کے خلاف چارج شیٹ داخل کر دی ہے۔‘

ترون تیج پال پر لگائے گئے الزامات میں نئے فوجداری قانون کے تحت ریپ کا معاملہ بھی شامل ہے۔

ترون تیج پال کو 30 نومبر 2013 کو گرفتار کیا گیا تھا۔ ان پر آئی پی سی کی دفعات 341 ، 342 ، 354 - اے اور 376 لگائی گئی ہیں۔

تیج پال پر فوجداری قانون (ترمیم) ایکٹ، 2013 کی دفعہ 376 (2) (کے) کے تحت بھی الزام لگایا گیا ہے، جس کا مطلب ہے کہ ایک ایسے شخص کی طرف سے ریپ کی کوشش جو خواتین کو کنٹرول میں کرنے کی حیثیت میں ہو۔

ان پر یہ الزام بھی لگایا گیا ہے کہ انہوں نے ایک ایسی خاتون کو ریپ کی کوشش کی جو انہیں اپنا سرپرست مانتی تھی۔

ترون تیج پال کو عدالتی حراست میں بھیجنے سے پہلے دفاع کے وکیل نے عدالت سے ضمانت دینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ تیج پال تفتیش میں تعاون کے لیے گووا میں رہنے کے لیے تیار ہیں۔

استغاثہ نے معاملے کی سنجیدگی کا حوالہ دیتے ہوئے عدالت سے تیج پال کو ضمانت نہ دینے کی استدعا کی تھی۔

استغاثہ کا کہنا تھا کہ ملزم اپنے رتبے اور حیثیت کا استعمال کر کے تفتیش کو متاثر کر سکتے ہیں۔ استغاثہ نے عدالت کو یہ بھی بتایا کہ متاثرہ خاتون صحافی اپنے خاندان کی واحد کفیل ہیں۔

اسی بارے میں