نریندر مودی نے شادی شدہ ہونا تسلیم کر لیا

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بدھ سے پہلے نریندر مودی کی بیوی کے بارے میں لوگوں کو کم ہی معلوم تھا

بھارت کی اہم جماعت بی جے پی کی جانب سے وزیر اعظم کے عہدے کے امیدوار اور گجرات کے وزیر اعلیٰ نریندر مودی نے پہلی بار سرِعام یہ تسلیم کیا ہے کہ وہ شادی شدہ ہیں۔

اس سے قبل نریندر مودی کی خانگی زندگی کے بارے میں لوگوں میں تجسس برقرار تھا۔

بدھ کو ریاست گجرات میں وڈودرا (جسے بڑودہ کے نام سے بھی جانا جاتا ہے) لوک سبھا کی سیٹ کے لیے اپنے کاغذات نامزدگی کے ساتھ انھوں نے جو حلف نامہ داخل کیا اس میں نریندر مودی نے بیوی کے نام والے کالم میں ’جشودابین‘ لکھا۔

اس حلف نامے کو گجرات الیکشن کمیشن کی ویب سائٹ پر دیکھا جا سکتا ہے۔

اب تک نریندر مودی حلف نامے میں بیوی کے نام والی جگہ کو پُر کرنے سے گریز کرتے رہے تھے اور اسے خالی چھوڑ دیتے تھے۔ انھوں نے سنہ 2012 کے اسمبلی انتخابات کے وقت بھی یہ کالم خالی چھوڑ دیا تھا۔

وڈودرا سیٹ کے لیے مودی نے اپنا حلف نامہ گجراتی زبان میں داخل کیا۔ مودی نے بیوی کا نام تو لکھا ہے لیکن انھوں نے اپنی بیوی کا پین کارڈ نمبر یا پھر ان کی جائیداد کی معلومات فراہم نہیں کی۔

انھوں نے جائیداد والے کالم میں ’پتہ نہیں‘ لکھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption مودی ان انتخابات میں بی جے پی کے وزیر اعظم کے امیدوار ہیں

بھارتی خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی کے مطابق اگرچہ مودی نے کاغذات نامزدگی بدھ کی صبح ہی داخل کیے تھے لیکن وڈودرا میں الیکشن کمیشن کی ضلعی انتظامیہ نے ڈسپلے بورڈ پر ان کا حلف نامہ آدھی رات کو لگایا۔

گجرات کے وڈودرا پارلیمانی انتخابی حلقے سے مودی کے مقابلے میں کانگریس کے مدھوسودن مستری میدان میں ہیں۔

گجرات میں 30 اپریل کو پولنگ ہوگی۔

نریندر مودی وڈودرا کے علاوہ اتر پردیش میں وارانسي لوک سبھا انتخابی حلقے سے بھی انتخاب لڑ رہے ہیں لیکن یہاں ان کے خلاف دہلی میں نئی تاریخ رقم کرنے والے عام آدمی پارٹی کے سربراہ اروند کیجری وال کے علاوہ دوسری پارٹی کے معروف نام بھی ہیں۔

اسی بارے میں