بھارت: ریل پٹری سے اتر گئی 15 افراد ہلاک

فائل فوٹو تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بھارت میں ٹرین حادثے عام ہیں

بھارت کی مغربی ریاست مہاراشٹر کے رائے گڑھ ضلع میں ناگوٹھنے کے قریب ایک مسافر ٹرین کے پٹری سے اتر جانے سے کم سے کم 15 افراد ہلاک اور 40 سے زیادہ افراد زخمی ہو گئے ہیں۔

اس حادثے کی وجہ سے كونكن ریلوے ٹریفک ٹھپ ہو گیا ہے اور کئی گاڑیوں کے روٹ میں تبدیلی کی گئی ہے۔

رائے گڑھ پولیس کے مطابق دیوا ساونتواڑی نام کی اس مسافر ٹرین کے چار ڈبے اور انجن کے پٹری سے اتر جانے سے یہ حادثہ پیش آیا۔

رائے گڑھ ضلع پولیس کنٹرول روم کے پولیس سب انسپکٹر آر ایم كامبلے نے بتایا: ’اس حادثے میں 15 افراد کی موت ہو گئی ہے اور 40 افراد زخمی ہیں۔‘

زخمیوں کو علاج کے لیے ناگوٹھنے اور روہا کے سرکاری ہسپتال لے جایا گيا ہے۔

پولیس نے ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا ہے جبکہ سنٹرل ریلوے زون نے کسی بھی ہلاکت کی تصدیق نہیں کی ہے۔

وسطی ریلوے حکام کے مطابق حادثہ صبح 9.40 بجے اس وقت ہوا جب دیوا ساونتواڑي پیسنجر ٹرین ممبئی سے 136 کلو میٹر دور ناگوٹھنے اور روہا کے درمیان پٹری سے اتر گئی۔

وسطی ریلوے کے پی آر افسر وی چندر شیکھر نے بتایا: ’اس واقعے کی اطلاع ملتے ہی اعلی حکام بریک ڈاؤن ٹرین اور طبی سہولیات کے ساتھ جائے وقوع کے لیے روانہ ہو گئے۔‘

منگلا ایکسپریس اور نظام الدین ایکسپریس کو کھیڈ کے پاس روک دیا گیا ہے جبکہ نیتراوتی ایکسپریس کو پونے کے راستے ممبئی کے لیے روانہ کیا جا رہا ہے۔

بھارت میں ٹرین حادثے عام ہیں۔ اس سے قبل جنوبی ریاست تمل ناڈو کے دارالحکومت چینیئی میں ریلوے سٹیشن پر جمعرات کی صبح دو بم دھماکے ہوئے جن میں ایک خاتون ہلاک ہو گئی۔

اس سے قبل دسمبر کے مہینے میں بھارتی ریاست آندھرا پردیش کے ضلح اننت پور میں ناندیڑ جانے والی ٹرین کی بوگی میں آتشزدگی کے سبب دو بچوں سمیت 26 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

اسی بارے میں