افغانستان کی صورتحال ناز ک ہے: جان کیری

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption جان کیری کے دورے سے ظاہر ہوتا ہے کہ امریکہ کو افغانستان میں حالات بگڑنے پر خاصی تشویش ہے

امریکہ کے سیکریٹری خارجہ جان کیری نے کابل میں کہا ہے کہ افغانستان کی صورتِ حال نازک ہے اور ایسا راستہ ہے جن مسائل حل ہوں۔

متنازع صدارتی انتخابات کے بعد پیدا ہونے والی کشیدگی پر قابو پانے کی کوشش کرنے

انھوں نے کابل میں امریکی سفارت خانے میں افغانستان میں اقوامِ متحدہ کے مشن کے سربراہ جان کیوبیس سے ملاقات کے بعد کہا کہ ’افغانستان نازک صورتِ حال سے گزر رہا ہے۔‘

’برتری‘ غنی کی مگر ڈاکٹر عبداللہ کا جیت کا دعویٰ

صدارتی انتخابات: دوسرے مرحلے میں اشرف غنی آگے

انھوں نے کہا کہ ’مجھے امید ہے کہ ایسا راستہ ہے جس سے سوالات کے جوابات دیے جا سکیں اور لوگوں کے شکوک و شبہات دور کیے جا سکیں اور مستقبل کی راہ ہموار ہو۔‘

جان کیری صدارتی انتخابات جیتنے کے دعویدار امیدواروں اشرف غنی اور ڈاکٹر عبداللہ عبداللہ سے ملاقاتیں کریں گے۔

قبل ازیں عبداللہ عبداللہ کی طرف سے متوازی حکومت بنانے کی خبروں کے پس منظر میں امریکی وزیر خارجہ جان کیری نے خبردار کیا تھا کہ کوئی اقتدار غصب کرنے کی کوشش نہ کرے۔ انھوں نے کہا کہ غیر قانونی طریقے سے حکومت پر قبضے سے افغانستان کو ملنے والا امریکی تعاون ختم ہو سکتا ہے۔

طالبان کی حکومت ختم ہونے کے بعد دس سال سے زائد عرصے تک افغانستان صدر کے عہدے پر فائز رہنے والے صدر حامد کرزئی اقتدار سے علیحدہ ہو رہے ہیں۔

کابل میں بی بی سی کے نامہ نگار علیم مقبول کا کہنا ہے کہ جان کیری کی طرف سے اتنی جلدی میں کابل کے دورے سے اندازہ ہوتا ہے کہ امریکہ کو صدارتی افغانستان میں انتخابات کے بعد صورتحال ابتر ہونے کے بارے میں کتنی تشویش ہے۔

ہمارے نامہ نگار کا کہنا ہے کہ اس سے واضح ہو گیا ہے کہ عراق سے امریکی فوج کے انخلا کے بعد وہاں کتنی تیزی سے حالات بگڑے ہیں جس کی وجہ سے وائٹ ہاؤس کی حتی الوسع کوشش ہوگی کہ افغانستان میں صورتِ حال کو قابو میں لایا جائے۔

جان کیری موجودہ افغان صدر حامد کرزئی سے بھی ملاقات کریں گے۔

افغان صدارتی انتخابات کے ابتدائی نتائج کے مطابق اشرف غنی نے 14 جون کو ہونے والی پولنگ میں 56 فیصد سے زائد ووٹ حاصل کیے، جبکہ عبداللہ عبداللہ نے 43 فیصد سے کچھ زیادہ ووٹ حاصل کیے ہیں۔

دونوں امیدواروں نے ووٹنگ میں دھاندلی کے الزامات عائد کیے تھے جس کے بعد 7000 سے زائد پولنگ سٹیشنوں پر ووٹوں کی جانچ ہو رہی ہے جو کل ووٹوں کا تقریباً ایک تہائی ہے۔

نامہ نگاروں کا کہنا ہے کہ ووٹوں کی دوبارہ گنتی سے حتمی نتائج پر بڑا فرق پڑ سکتا ہے، جس کا اعلان 22 جولائی کو متوقع ہے۔

افغانستان میں اقوامِ متحدہ کے مشن نے خبردار کیا ہے کہ کسی بھی امیدوار کا انتخابات میں جیت کا دعویٰ کرنا ’قبل از وقت‘ ہوگا۔

مشن نے صداراتی امیدواروں سے قابو میں رہنے ہوئے اپنے حامیوں کو ایسے اقدامات کرنے سے روکنے کا کہا ہے جس سے ملک میں عدم استحکام پیدا ہو۔

اسی بارے میں