نقشہ جسم کے اوپر کے حصے پر ٹیٹو کرائیں ورنہ سزا

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption اگرچہ برما کا نقشہ ایک ایبسٹریکٹ تصویر کی مانند ہے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ ہم اس کی بےحرمتی ہونے دیں

برما کی ایک عدالت نے کہا ہے کہ ملک کا نقشہ جسم کے نچلے حصے پر ٹیٹو کرانے پر تین سال قید کی سزا ہو سکتی ہے۔

برما کی میزیما ویب سائٹ کے مطابق ضلعی عدالت کے جج نے شہریوں کو متنبہ کیا ہے کہ سزا کے ساتھ ساتھ 300 ڈالر جرمانہ بھی عائد کیا جائے گا۔

مندالے ضلعے کے ایڈووکیٹ جنرل کا اس بارے میں کہنا تھا: ’ملک کا نقشہ ٹیٹو کی صورت میں جسم کے اوپر کے حصے میں قابل قبول ہے کیونکہ اس سے ملک پر فخر کرنے کا تاثر ملتا ہے۔ لیکن جسم کے نچلے حصے پر ٹیٹو ملک کی بے عزتی کے مترادف ہے۔‘

ایڈووکیٹ جنرل سے جب اس بات کی وضاحت مانگی گئی کہ کیا جسم کے ’غیر مناسب‘ حصوں پر ملک کا نقشہ ٹیٹو کرانے پر سزا ہو سکتی ہے تو ان کا کہنا تھا: ’ایسے ٹیٹو پر یونین سیل لا کے تحت سزا ہو سکتی ہے۔‘

ان کا مزید کہنا تھا کہ اگرچہ برما کا نقشہ ایک ایبسٹریکٹ تصویر کی مانند ہے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ ہم اس کی بےحرمتی ہونے دیں۔