’آل انڈیا ریڈیو نے 100 براڈکاسٹر فارغ کر دیے‘

Image caption دی ہندو کے مطابق کولکتہ میں پہلے زیادہ سے زیادہ عمر 30 سال رکھی گئی تھی جسے بعد میں بڑھا کر 35 سال کر دیا گیا

بھارت کے سرکاری ریڈیو سٹیشن آل انڈیا ریڈیو نے 35 سال سے زیادہ عمر کے تقریباً 100 ریڈیو براڈکاسٹروں کو زیادہ عمر کے باعث نوکریوں سے نکال دیا ہے۔

بھارتی اخبار دی ہندو کے مطابق آل انڈیا ریڈیو کے مطابق براڈکاسٹروں کی نئی زیادہ سے زیادہ عمر 35 سال کر دی گئی ہے۔

آل انڈیا ریڈیو کا کہنا ہے کہ یہ قدم اس لیے اٹھایا گیا ہے کہ سرکاری ادارے میں نئی جان ڈالی جا سکے۔

دی ہندو کے مطابق کولکتہ میں پہلے زیادہ سے زیادہ عمر 30 سال رکھی گئی تھی جسے بعد میں بڑھا کر 35 سال کر دیا گیا۔

آل انڈیا ریڈیو کے اس فیصلے پر عمل درآمد کو ٹرائبیونل نے آٹھ اگست تک روکنے کا حکم جاری کیا تھا۔ تاہم ان براڈکاسٹروں کو نو اگست کو نوکریوں سے نکال دیا گیا۔

جو براڈکاسٹر اس فیصلے سے متاثر ہوئے ہیں وہ گذشتہ کئی سالوں سے آل انڈیا ریڈیو میں کام کر رہے تھے۔

آل انڈیا ریڈیو کی کولکتہ برانچ کی براڈکاسٹرز ایسوسی ایشن کی اونتیکا گوش نے دی ٹائمز آف انڈیا کو بتایا: ’یہ سمجھ سے بالاتر ہے کہ ہماری نوکریاں محض اس لیے ختم کر دی جائیں کہ ہم 35 سال سے زیادہ کے ہو گئے ہیں۔ سائنس میں یہ کہیں نہیں ثابت ہوا کہ 35 سال کے بعد انسان کی آواز اچھی نہیں رہتی۔‘

کولکتہ کے اخبار دی ٹیلیگراف کے مطابق آل انڈیا ریڈیو کا کہنا ہے کہ وہ ان براڈکاسٹروں کو نوکری پر رہنے دیں گے جو ٹیسٹ میں ثابت کر سکیں کہ ان کی آواز سنجیدہ اور بورنگ نہیں ہے۔

آل انڈیا ریڈیو 23 زبانوں میں براڈکاسٹ کرتا ہے۔