’دس میں سے چھ مرد بیوی کو پیٹتے ہیں‘

تصویر کے کاپی رائٹ SPL
Image caption بھارت میں عورتوں کے خلاف گھریلو تشدد رپورٹ کرنے کے واقعات میں اضافہ ہو رہا ہے

اقوام متحدہ کی ایک رپورٹ کے مطابق بھارت میں ہر دس میں چھ مرد اپنی بیوی یا پھر خاتون دوست کو پیٹتے ہیں۔

اقوام متحدہ کے ورلڈ پاپولیشن فنڈ اور واشنگٹن میں واقع انٹریشنل سینٹر فار ریسرچ آن ویمن کی ایک مشترکہ تحقیق کے دوران دس میں سے چھ بھارتی مردوں نے اس حقیقت کو تسلیم کیا۔

اس تحقیق کے دوران بھارت کی سات ریاستوں میں 18 سے 49 سال کی عمر کے 9205 مرد شامل ہوئے۔

اس رپورٹ میں یہ سامنے آیا کہ جن مردوں نے اپنے بچپن میں کسی قسم کے تعصب کا سامنا کیا تھا یا پھر جنھیں مالی مسائل کو سامنا کرنا پڑا، وہ خواتین کے بارے میں زیادہ متشدد انداز رکھتے ہیں۔

مطالعے کے مطابق خود اپنی زندگی میں امتیازی سلوک کا سامنا کرنے والے مرد اپنی ساتھی خواتین کے ساتھ چار گنا زیادہ پرتشدد رویہ اپناتے ہیں۔

اس تحقیق میں بھارت کی ریاست اتر پردیش، راجستھان، پنجاب، ہریانہ، اڑیسہ، مدھیہ پردیش اور مہاراشٹر کو شامل کیا گیا تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Science Photo Library
Image caption تحقیق میں شامل شامل کئی خواتین کے نزدیک میاں بیوی کے رشتے میں ایسا تشدد عام بات ہے

بھارت میں جرائم کا ریکارڈ رکھنے والے ادارے کے مطابق 2013 میں ہندوستان میں خواتین کے خلاف جتنے جرائم ہوئے ان میں 38 فیصد خواتین اپنے شوہر اور ان کے رشتہ داروں کی بے رحمی کا شکار ہوئیں۔

اس کے علاوہ یہ بھی معلوم ہوا کہ خواتین کی بڑی تعداد گھریلو تشدد کے بارے میں پولیس کو شکایت نہیں کرتی۔

اس تحقیق میں 3158 خواتین بھی شامل تھیں اور ان میں سے نصف سے زائد نے تسلیم کیا کہ انھیں تشدد کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

ان خواتین کو زیادہ تر جسمانی تشدد کا نشانہ بنایا گیا جس میں تھپڑ مارنے، دھمکانے، گلا دبانے اور جھلسانے جیسے تشدد کا سامنا کرنا پڑا۔

رپورٹ کے مطابق خواتین کو اس کے علاوہ جذباتی، جنسی اور معاشی تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

تحقیق میں شامل شامل کئی خواتین کے نزدیک میاں بیوی کے رشتے میں ایسا تشدد عام بات ہے۔

بی بی سی کی ایک حالیہ رپورٹ کے مطابق بھارت میں عورتوں کے خلاف گھریلو تشدد رپورٹ کرنے کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے جس کی وجہ عورتوں میں زیادہ آگہی اور پولیس اور غیر سرکاری تنظیموں کا سرگرم ہونا ہے۔

بھارت میں سنہ 2003 میں گھریلو تشدد کے 50,703 کیس رپورٹ ہوئے تھے جو 2013 میں بڑھ کر 118,866 تک پہنچ گئے ہیں جو دس برسوں میں 134 فیصد اضافہ ہے۔

اسی بارے میں