جھارکھنڈ:جیل سے 15 قیدی فرار، پولیس فائرنگ سے دو ہلاک

Image caption خبر رساں اداروں کے مطابق بھاگنے والوں میں ماؤ نواز شدت پسند بھی شامل ہیں

بھارت کی مشرقی ریاست جھاڑکھنڈ میں منگل کو پولیس نے فرار کی کوشش کرنے والے قیدیوں پر فائرنگ کرکے کم سے کم دو افراد کو ہلاک کر دیا تاہم کچھ مبینہ شدت پسندوں سمیت 15 قیدی بھاگنے میں کامیاب ہوگئے۔

یہ واقعہ مغربی سنگھ بھوم ضلع کے چائی باسا شہر کی جیل میں شام تقریباً چار بجے کے قریب پیش آیا۔

ریاست کے ڈائریکٹر جنرل پولیس راجیو کمار نے اس خبر کی تصدیق کی ہے کہ 15 قیدی بھاگنے میں کامیاب ہوگئے جن میں کئی ایسے قیدی بھی شامل ہیں جو شدت پسندی کی کارروائیوں کے الزام میں جیل میں تھے۔

خبر رساں اداروں کے مطابق بھاگنے والوں میں ماؤ نواز شدت پسند بھی شامل ہیں۔

پولیس کے مطابق قیدیوں کو عدالت میں پیشی کے بعد جیل واپس لایا گیا تھا اور جس گاڑی میں یہ لوگ سوار تھے وہ صدر دروازے سے جیل کے اندر داخل ہوچکی تھی۔

راجیو کمار کے مطابق واقعہ کی تفتیش جاری ہے لیکن ممکنہ طور پر صدر دروازہ فوراً بند نہیں کیا گیا تھا اور قیدیوں نے موقع دیکھ کر بھاگنے کی کوشش کی اور جیل کے گارڈ کی فائرنگ کے نتیجے میں دو قیدی موقع پر ہی ہلاک ہوگئے۔

ریاست میں قبائلیوں کی بڑی آبادی ہے اور ریاست کے کافی بڑے حصے میں نکسلیوں کا اثر ہے۔

جھاڑکھنڈ میں ریاستی اسمبلی کے انتخابات ہو رہے ہیں اور وہاں آج تیسرے مرحلے کی پولنگ میں ووٹ ڈالے گئے۔

اسی بارے میں