ڈھاکہ کی فیکٹری میں آتشزدگی سے 13 افراد ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ focus bangla

بنگلہ دیش کے دارالحکومت ڈھاکہ میں حکام کے مطابق پلاسٹک کی ایک فیکٹری میں آگ لگنے کے نتیجے میں کم از کم 13 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہو گئے ہیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ نسیم پلاسٹک فیکٹری میں آگ لگنے کی وجوہات کے بارے میں معلوم نہیں ہو سکا ہے تاہم ممکنہ طور پر آگ گیس جنریٹر کے ایک خراب جنریٹر یا بوائلر کے نتیجے میں لگی۔

حکام کے مطابق فائر بریگیڈ کے عملے نے آگ پر مکمل قابو پا لیا ہے اور اب ملبے کی تلاشی لی جا رہی ہے۔

بنگلہ دیش میں فیکٹریوں میں ناقص حفاظتی انتظامات نہ ہونے کی وجہ سے آگ لگنے کے واقعات پیش آتے رہتے ہیں۔

سال 2012 میں ڈھاکہ کے مضافات میں واقع ایک فیکٹری میں آگ لگنے کے نتیجے میں 112 مزدور مارے گئے تھے۔

سال 2013 میں ایک اور مضافاتی علاقے میں واقع گارمنٹس کی فیکٹری کی عمارت منہدم ہونے کے نتیجے میں ایک ہزار ایک سو 35 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

ابتدائی تحقیقات کے مطابق فیکٹری میں موثر حفاظتی انتظامات نہ ہونے کے سبب یہ واقعہ رونما ہوا تھا۔

اسی بارے میں