داؤد ابراہیم کا بھائی بھتہ خوری کے الزام میں گرفتار

Image caption بھارت الزام عائد کرتا ہے کہ داؤد ابراہیم پاکستان میں ہیں جبکہ پاکستان اس کی سختی سے تردید کرتا ہے

بھارت کے شہر ممبئی میں انڈر ورلڈ سرغنہ داؤد ابراہیم کے چھوٹے بھائی اقبال کاسکر کو تاوان اور بھتہ وصول کرنے کے الزام میں گرفتار کیا ہے۔

پولیس ذرائع کے مطابق داؤد ابراہیم کے بھائی اقبال کاسکر اور ان کے ایک دوسرے ساتھی شبّو پر تین لاکھ روپے بھتہ مانگنے کا الزام ہے۔

دونوں کو بدھ کے روز عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

ممبئی کے ایک ریئل سٹیٹ ایجنٹ سلیم شیخ نے گذشتہ ماہ کی 30 تاریخ کو ان دونوں کے خلاف بائی کلا پولیس تھانے میں مقدمہ درج کرایا تھا۔

پولیس کے مطابق تحقیقات سے معلوم ہے کہ سیلم شیخ کو دھمکی اقبال کاسکر سے ملی تھی۔

Image caption اقبال کاسکر کو بدھ کے روز عدالت میں پیش کیا جائے گا

اس کے بعد منگل کے روز پولیس نے اقبال کاسکر اور شبّو کو تھانے میں پوچھ گچھ کے لیے بلانے کے بعد دونوں کو گرفتار کر لیا۔

اس سے پہلے اقبال کاسکر پر 1993 کے ممبئی بم دھماکوں کی سازش تیار کرنے کا الزام لگ چکا ہے۔

بھارت کے وزیراعظم نریندر مودی نے اقتدار میں آنے سے پہلے کہا تھا کہ اگر وہ وزیر اعظم منتخب ہو گئے تو وہ بھارت کو مطلوب داؤد ابراہیم کو پاکستان سے بھارت لے کر آئیں گے۔

اس بیان کے مطابق پاکستان کے وزیر داخلہ چوہدری نثار علی نے کہا تھا کہ ’نریندر مودی کو پہلے یہ فیصلہ کرنا چاہیے کہ داؤد ابراہیم کہاں رہتا ہے اور پھر ان کو پاکستان پر حملے کاخواب دیکھنا چاہیے۔‘

پاکستان کے سابق سٹار کرکٹر جاوید میانداد کے بیٹے کی شادی داؤد ابراہیم کی بیٹی سے ہوئی ہے۔

اسی بارے میں