ڈھاکہ: کشتیوں کے تصادم کے بعد درجنوں مسافر لاپتہ

تصویر کے کاپی رائٹ G. M. Masum Billah WCS
Image caption ’یہ کشتی اس جگہ ڈوبی ہے جہاں دریا کی گہرائی 20 فٹ ہے اور ابھی معلومات اکٹھی کی جا رہی ہیں‘

بنگلہ دیش کے دارالحکومت ڈھاکہ کے قریب دو کشتیوں کے تصادم کے نتیجے میں چالیس سے زیادہ مسافر ہلاک ہو گئے ہیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ یہ واقعہ ڈھاکہ سے 50 کلومیٹر کے فاصلے پر دریائے پدما میں پیش آیا۔

حکام کے مطابق کشتی کے کپتان کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ ابتدائی اطلاعات کے مطابق تصادم ایک مسافر بردار اور ایک مال بردار کشتی کے درمیان ہوا۔

حکام کا کہنا ہے کہ ٹکر کے بعد مسافر بردار کشتی ڈوب گئی جس میں ایک سو افراد سوار تھے۔

حکام کا کہنا ہے کہ 40 افراد کو بچا لیا گیا ہے جبکہ باقی مسافروں کی تلاش جاری ہے۔

اطلاعات کے مطابق حادثے میں متعدد افراد لاپتہ ہیں اور امدادی کارروائیاں شروع کر دی گئی ہیں۔

اس سے قبل امریکی خبر رساں ایجنسی اے پی سے بات کرتے ہوئے ریسکیو آپریشن کے انچارج انسپکٹر زیہاد میاں کا کہنا تھا کہ ابھی تک یہ نہیں معلوم کہ کتنے لوگ کشتی میں سوار تھے۔

’یہ کشتی اس جگہ ڈوبی ہے جہاں دریا کی گہرائی 20 فٹ ہے۔ ابھی معلومات اکٹھی کی جا رہی ہیں۔ میرے خیال میں زیادہ تر افراد بچ گئے ہیں۔‘

دریائے پدما بنگلہ دیش کا سب سے بڑا دریا ہے اور بنگلہ دیش میں اکثر کشتیوں کے حادثے ہوتے رہتے ہیں۔

اسی بارے میں