پولیس نےہار 60 کیلے کھلا کر نکال لیا

Image caption ہار کی مالکہ نے کہا ہے کہ وہ اب یہ ہار دوبارہ کبھی نہیں پہنیں گي

بھارت کے شہر ممبئی میں پکڑے گئے ایک ’چور‘ انیل یادو کے پیٹ سے نگلا گیا قیمتی ہار نکال لیاگیا۔ ملزم کو پیر کے دن 60 سے زائد کیلے اور خاص کھانا کھلانا کھلایاگیا جس کے بعد جمعرات کو ان کے پیٹ سے فضلے کے راستے ہار نکل گیا۔

انیل یادو پر پیر کو ایک خاتون کا ہار چھین کر فرار ہونے کی کوشش کرنے کا الزام ہے۔ ہار کی قیمت تقریباً 63,000 بھارتی روپے بتائی گئی تھی۔

ممبئی میں ساين ہسپتال نے انیل کے پیٹ کے ایکس رے میں ہار دیکھنے کا بعد انھیں چار بار اینیما بھی دیا تھا۔

اس دوران ہار کی مالکہ نے کہا ہے کہ وہ اب یہ ہار دوبارہ کبھی نہیں پہنیں گي۔

مڈڈے اخبار کے نامہ نگار سوربھ وكتانيا سے بات چیت میں راجشري ميكر نے بتایا کہ وہ اس ہار کو اب اپنے سنار کے پاس لے جائیں گی اور اسے پگھلا کر نیا ہار بنوائیں گي۔

ہسپتال کے حکام نے بتایا کہ کیلے، اینٹاسڈ اور خاص کھانا کھانے کے بعد جمعرات کی صبح انیل کے پاخانے میں ہار نکل گیا۔

حکام کے مطابق ہار نکلنے میں زیادہ وقت لگا کیونکہ اس کا بڑا حصہ نکلنے میں رکاوٹ بن رہا تھا۔

بدھ کو بی بی سی سے بات کرتے ہوئے پولیس افسر راہل پوار نے بتایا تھا کہ انیل نے 52 سالہ راجشری ميكر کےگلے سے ہار اس وقت چھین لیا تھا جب وہ ساين کے علاقے میں اپنے گھر واپس لوٹ رہی تھی۔

پولیس اور وہاں موجود لوگوں نے انیل پیچھا کرکے انھیں پکڑ لیا تھا جس کے بعد انیل نے ہار نگل لیا تھا۔

اس کے بعد اسے پولیس نے ہسپتال میں داخل کروایا اور اسے کیلے کھلائےگئے۔

ڈاکٹر یہ طریقہ کار استعمال کرنے پر سوال اٹھاتے ہوئے کہتے ہیں کہ دواؤں کے استعمال سے اس کام کو آسانی سے انجام دیا جا سکتا تھا۔

Image caption ہسپتال نے انیل کے پیٹ کے ایکس رے میں ہار دیکھنے کا بعد انھیں چار بار اینیما بھی دیا تھا

اسی بارے میں