پرانی دہلی میں 64 لاکھ کا بکرا

Image caption علی نے اپنے بکرے کی قیمت 64 لاکھ روپے رکھی ہے

دنیا بھر کی طرح بھارت میں بھی عید الاضحیٰ کی تیاریاں عروج پر ہیں اور مویشیوں کی منڈیاں سج گئی ہیں۔

بھارت کے دارالحکومت دہلی کے پرانی دہلی علاقے میں بکروں کا بازار لگا ہوا ہے۔ یہاں بکروں کی قیمت پانچ ہزار روپے سے شروع ہوتی ہے۔

جن بکروں کا وزن زیادہ ہے یا ان پر مذہبی نشان بنے ہوئے ہیں، ان کی قیمت ہزاروں میں نہیں بلکہ لاکھوں میں لگائی جا رہی ہے۔

پرانی دہلی کے کبوتر بازار میں علی اپنے بکرے کے ساتھ آئے ہیں جس کی قیمت انھوں نے 64 لاکھ روپے رکھی ہے یعنی ایک کروڑ پاکستانی روپے سے زیادہ۔

Image caption علی کا کہنا ہے کہ بکرے کو وہ کھانے میں چنا اور کشمش کھلاتے ہیں اور دودھ پلاتے ہیں

بکرے کے بارے میں علی کہتے ہیں کہ ان کے بکرے کی خاص بات یہ ہے کہ اس پر ’اللہ ہو‘ اور ’786‘ کا نشان بنا ہوا ہے۔

انھوں نے کہا کہ وہ بکرے کو سال بھر سے ہی تیار کرنا شروع کر دیتے ہیں۔ اس بکرے کو وہ کھانے میں چنا اور کشمش کھلاتے ہیں اور دودھ پلاتے ہیں۔

Image caption ریاست خان نے اپنی بھیڑ کی قیمت ایک لاکھ روپے لگائی ہے

بکرے تو بکرے یہاں بھیڑ بھی لاکھ میں فروخت ہو رہی ہیں۔ ریاست خان نے اپنی بھیڑ کی قیمت ایک لاکھ روپے رکھی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ وہ اس بھیڑ کی غذا پر روزانہ 250 روپے تک خرچ کرتے ہیں۔

ان کا دعویٰ ہے کہ اس بھیڑ پر چاند تارا بنا ہوا ہے۔

اسی بارے میں