بلخ میں خود کش حملہ، تین افغان فوجی ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption افغانستان میں ایک بار پھر شدت پسندوں کی جانب سے حملوں کا سلسلہ تیز ہوا ہے

شمالی افغانستان میں افغان فوجیوں سے بھری گاڑی پر خودکش حملے میں تین فوجی ہلاک ہوگئے ہیں۔

بی بی سی کے نامہ نگار سید انور کے مطابق یہ حملہ پیر کی صبح صوبہ بلخ میں کیا گیا اور اس کا ہدف ایک منی بس تھی جس پر افغان نیشنل آرمی کے جوان سوار تھے۔

نامہ نگار کے مطابق مقامی انتظامیہ نے اس حملے میں تین اہلکاروں کی ہلاکت اور 18 کے زخمی ہونے کی تصدیق کی ہے۔

تاحال کسی گروہ یا تنظیم نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

گذشتہ کچھ عرصے سے افغانستان میں ایک بار پھر شدت پسندوں کی جانب سے حملوں کا سلسلہ تیز ہوا ہے۔

رواں ماہ کے آغاز میں دارالحکومت کابل میں ایک خودکش حملے میں کم سے کم 20 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

اس حملے میں شہر کے مغربی حصے میں واقع اس عمارت کو نشانہ بنایا گیا تھا جہاں افغان پولیس کے اس یونٹ کا دفتر ہے جو طالبان کے خلاف آپریشن کرتا ہے۔

طالبان نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔

ان حملوں کے بعد ان قیاس آرائیوں کو تقویت ملی ہے کہ یہ حملے طالبان کی جانب سے مذاکرات کے دوران اپنا پلہ بھاری رکھنے کے لیے کیے جا رہے ہیں۔

اسی بارے میں