بندوق کی ساتھ سیلفی، لڑکا جان کی بازی ہار گیا

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption حایہ کچھ عرصے میں بھارت میں سیلفی لیتے ہوئے متعدد حادثات ہوئے ہیں

بھارت کی شمالی ریاست میں پندرہ سالہ لڑکا بندوق کے ساتھ سیلفی لیتے ہوئے غلطی سے گولی چلنے سے ہلاک ہوگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ضلع پٹھان کوٹ کے علاقے میں پندرہ سالہ رمندیپ سنگھ مکان پر اپنے والد کی بندوق کے ساتھ سیلفی لے رہے تھے جب بندوق غلطی سے چل گئی۔

٭ سیلفی لیتے ہوئے خود کو گولی مار لی

ان کو ہسپتال لے جایا گیا جہاں وہ اتوار کے روز زخموں کی تاب نہ لا سکے۔

بی بی سی ہندی سے بات کرتے ہوئے ایک سینیئر پولیس اہلکار نے کہا کہ اس واقعے کی تحقیقات ابھی جاری ہیں۔

پٹھان کوٹ ضلع کے سپرنٹینڈنٹ راکیش کوشل نے بی بی سی ہندی کو بتایا کہ لڑکے کا خاندان اب بھی صدمے میں ہے۔

’ہمیں خاندان والوں نے بتایا ہے کہ لڑکے کی موت سیلفی لیتے وقت ریوالور چلنے سے ہوئی۔ ہم ابتدائی تفتیش کے بعد ہی اس بارے میں مزید کچھ کہہ سکتے ہیں۔‘

واضع رہے کہ حال ہی میں بھارت میں سیلفی لیتے ہوئے متعدد حادثات ہوئے ہیں۔ جنوری میں ملک کے شمال میں واقع شہر چنئی میں ایک لڑکے کی موت اس وقت ہوئی جب وہ ٹرین کے پٹڑی پر سیلفی لے رہا تھا۔

مشرقی شہر ممبئی میں ایک 18 سالہ لڑکی کی سمندر میں سیلفی لیتے ہوئے موت واقع ہوجانے کے بعد پولیس نے کئی علاقوں کو ’نو سیلفی زون‘ قرار دے دیا تھا جہاں سیلفی لینا ممنوع ہے۔

ان علاقوں میں سمندر کے قریب واقع میرین ڈرائیو والا علاقہ اور چوپاٹھی بیچ شامل ہیں۔

بھارت میں ہندوؤں کے اہم مذہبی تہوار کمبھ میلے کو بھی سیلفی لینے کے لیے ممنوعہ علاقہ قرار دیا گیا تھا۔

منتظمین کا کہنا ہے کہ ایک سروے سے معلوم ہوا کہ عوام سیلفیاں لینے میں بہت وقت ضائع کرتی ہے جس سے مجمعے کے آگے بڑھنے کی رفتار کم ہو جاتی ہے اور دھکم پیل کی صورتحال پیدا ہوجاتی ہے۔

اسی بارے میں