یمن: سکیورٹی فورسز کی فائرنگ، نو ہلاکتیں

یمن کے دارالحکومت صنعاء میں سکیورٹی فورسز کی صدارتی محل کے قریب جمع ہونے کی کوشش کرنے والے مظاہرین پر فائرنگ کے نتیجے میں نو افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں۔

لاکھوں مظاہرین جنوبی شہر طائز سے مارچ کرتے ہوئے دو سو ستر کلومیٹر کا سفر کر کے دارالحکومت پہنچے ہیں۔

وہ صدر علی عبداللہ صالح کو ایک معاہدے کے تحت مقدمے سے استثنٰی دیے جانے پر احتجاج کر رہے تھے۔

صدر صالح نے پیش کش کی ہے کہ وہ یمن میں اصلاحات کی اجازت دیتے ہوئے امریکہ چلے جائیں گے۔

گذشتہ ماہ انہوں نے اپنے اختیارات اپنے نائب کو منتقل کر دیے تھے تاہم فروری میں طے کردہ انتخابات تک صدر کا خطاب ان کے پاس تھا۔