’بحیرۂ روم عبور کرنے کوشش، 1500 ہلاک‘

اقوامِ متحدہ کے ادارہ برائے پناہ گزیناں کا کہنا ہے کہ سنہ 2011 میں ڈیڑھ ہزار سے زائد افراد بحیرۂ روم عبور کرنے کی کوشش کے دوران لاپتہ یا ہلاک ہوئے۔

ادارے کے مطابق یہ اب تک ریکارڈ کی جانے والی سب سے زیادہ تعداد ہے۔

یو این ایچ سی آر کی ترجمان سبیلا ولکس کا کہنا ہے کہ زیادہ ہلاکتیں دو ہزار گیارہ کے ابتدائی چھ ماہ میں ہوئیں۔

یہ وہ زمانہ ہے جب تیونس اور لیبیا میں بدامنی اور سیاسی بےچینی کا دور دورہ تھا۔