’ٹیلیفونک گفتگو کا مستند ریکارڈ بھیجیں‘

متنازع میمو کی تحقیقیات کرنے والے عدالتی کمیشن نے امریکی شہری منصور اعجاز سے کہا ہے کہ وہ حسین حقانی کے ساتھ ہونے والی ٹیلیفونک گفتگو کا مستند ریکارڈ کمیشن کو بھجوائیں۔

امریکی شہری منصور اعجاز نے جمعہ کو بھی متنازع میمو کی تحقیقیات کرنے والے عدالتی کمیشن کے سامنے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے اپنا بیان ریکارڈ کرایا۔

پاکستان کے امریکہ میں سابق سفیر حسین حقانی کے وکیل نے متنازع میمو کی تحقیقات کے لیے جوڈیشل کمیشن کے طریقہ کار پر اعتراض کیا ہے۔