مدرسے کے استاد کو 18 سال جیل

ملائشیا میں ایک مدرسے کے استاد کو ایک طالبِ علم کو ہلاک کرنے کے جرم میں اٹھارہ سال قید کی سزا سنائی گئی ہے۔

حنیف محمد علی نامی اس استاد نے اعتراف کیا ہے کہ اس نے گزشتہ سال ایک سات سالہ طالب علم کو اپنے ایک ہم جماعت کی رقم چرانے کے الزام میں پہلے تو اس قدر پیٹا اور پھر گلا گھونٹا کہ اس کی موت واقع ہو گئی۔

سزا سنانے والے جج نے اس امید کا اظہار کیا ہے کہ اس سزا کو وہ تمام اساتذہ ایک انتباہ سمجھیں گے جو طالب علموں سے شدید مار پیٹ کرتے ہیں۔

حنیف کے خلاف پہلے تو اقدامِ قتل کا مقدمہ درج کیا گیا تھا جس کی سزا موت ہوتی ہے لیکن بعد میں مقدمے کی نوعیت کو تبدیل کر دیا گیا۔