’وزیراعظم انیس مارچ تک بیان جمع کروائیں‘

پاکستان کی سپریم کورٹ نے توہینِ عدالت کے مقدمے میں وزیراعظم پاکستان کو انیس مارچ تک تحریری بیان جمع کروانے کا حکم دیا ہے۔

عدالت نے مقدمے کی سماعت اکیس مارچ تک ملتوی کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر وزیراعظم عدالت میں آ کر بیان قلمبند کروانا چاہیں تو وہ اکیس مارچ کو پیش ہو سکتے ہیں۔

جمعرات کو مقدمے کی سماعت کے دوران اعتراز احسن نے کہا کہ ممکن ہے کہ ان کا موکل عدالت میں حاضر ہو کر اپنا بیان قلمبند کروانا چاہے۔

اس پر عدالت نے کہا کہ اگر وزیراعظم تحریری بیان جمع کروانا چاہتے ہیں تو انیس مارچ کو جمع کروا دیں تاکہ اکیس مارچ کو اس پر دلائل کا آغاز کیا جائے تاہم اگر وہ خود عدالت میں پیش ہو کر بیان دینا چاہتے ہیں تو اکیس مارچ کو عدالت میں آ سکتے ہیں۔