پشاور، ڈاکٹر شکیل آفریدی برطرف

پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخوا کی حکومت نے القاعدہ رہنما اسامہ بن لادن کے بارے میں امریکیوں کو معلومات فراہم کرنے کے الزام میں پاکستانی ڈاکٹر شکیل آفریدی کو نوکری سے برطرف کردیا ہے۔

محکمہ صحت خیبر پختونخوا کی طرف سے جمعرات کو جاری ہونے والے ایک اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ سابق ایجنسی سرجن اور گریڈ اٹھارہ کے افسر ڈاکٹر شکیل آفریدی کو قواعد اور سروس رولز کے خلاف ورزی پر نوکری سے برطرف کیا گیا ہے۔

محکمہ صحت حکام کا کہنا ہے کہ ایبٹ آباد میں سی آئی اے کے کہنے پر جعلی حفاظتی ٹیکوں کے مہم میں معاونت کرنے پر پیرامیڈیکل سٹاف کے سترہ اہلکاروں کو پہلے ہی نوکریوں سے برطرف کیا جاچکا ہے۔