مصر میں ہنگامی قانون غیر مؤثر

مصر میں ایک ایسا ہنگامی قانون غیر موثر ہوگیا ہے جس کے تحت ملک کی سکیورٹی فورسز کو مشتبہ افراد کو حراست میں لینے اور ان پر خصوصی عدالتوں میں مقدمہ چلانے کے تقریباً لامحدود اختیارات حاصل تھے۔

جمعرات کی شب بارہ بجے غیر موثر ہونے والا یہ ہنگامی قانون تیس برس سے نافذالعمل تھا۔

اسے سنہ انیس سو اکیاسی میں صدر انور سادات کی قاتلانہ حملے میں ہلاکت کے بعد متعارف کروایا گیا تھا۔

تاہم سابق صدر حسنی مبارک کے اقتدار کے خاتمے کے بعد مصر میں زمامِ اقتدار سنبھالنے والے فوجی حکمرانوں نے اشارے دیے تھے کہ وہ اس قانون کی تجدید نہیں کریں گے۔

اس قانون کا خاتمہ حسنی مبارک حکومت کے خاتمے میں پیش پیش جمہوریت نواز مظاہرین کا ایک اہم مطالبہ تھا۔