خیبر پختونخوا: تین سو تین ارب روپے کا بجٹ پیش

صوبہ خیبر پختونخواہ حکومت نے تین سو تین ارب روپے کا بجٹ پیش کیا ہے۔

یہ بجٹ صوبائی حکومت کا پانچواں بجٹ تھا۔

سنہ دو ہزار بارہ - تیرہ کے بجٹ کا کل حجم تین سو تین ارب روپے تھا۔ گزشتہ برس کے مقابلے میں یہ بجٹ بائیس فیصد زیادہ ہے۔

اس بجٹ میں ترقیاتی منصوبوں کے لیے ستانوے ارب پتالیس کروڑ کی ریکارڈ رقم مختص کی گئی ہے جبکہ تعلیم اور صحت کے لیے بالترتیب چھ ارب سات کروڑ اور دس ارب پینتیس کروڑ رکھے گئے ہیں۔

صوبائی اسمبلی میں بجٹ پیش کرتے ہوئے صوبائی وزیرِ خزانہ انجینیئر ہمایوں خان کا کہنا تھا کہ سنہ دو ہزار بارہ - تیراہ کا بجٹ ایک متوازن بجٹ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا گیا۔صوبائی وزیرِ خزانہ نے بتایا کہ آئندہ بجٹ میں بیرونی امداد کی مد میں تئیس ارب روپے متوقع ہیں۔