ملک ریاض کی سپریم کورٹ میں پیشی

کاروباری شخصیت ملک ریاض حسین نے سپریم کورٹ کے چیف جسٹس افتخار چوہدری کے بیٹے ارسلان افتخار پر مبینہ بدعنوانی کے الزامات کی سماعت کرنے والے دو رکنی بینچ کے سامنے پیش ہو کر دستاویزات پیش کی ہیں جن میں ارسلان افتخار کے غیر ملکی دوروں پر خرچ کی گئی اور انہیں نقد دی گئی رقوم کی تفصیلات دی گئی ہیں۔

ملک ریاض کے وکیل زاہد بخاری کا کہنا ہے کہ یہ ارسلان افتخار کو یہ رقوم ان کے موکل کے داماد سلمان احمد نے ادا کی تھیں۔

ان کے مطابق ارسلان افتخار نے سپریم کورٹ میں بحریہ ٹاؤن سے متعلق زیرِ سماعت مقدمات میں ریلیف دلوانے کی یقین دہائی کروائی تھی اور ان کے غیر ملکی دوروں کے اخراجات برداشت کرنے اور انہیں نقد رقم کی ادائیگی کا مقصد یہی تھا لیکن ایسا نہیں ہوا۔

عدالت نے مقدمے کی سماعت جمعرات تک ملتوی کر دی ہے۔