سرینا ولیم ایک بار پھر ویمبلڈن فاتح

لندن میں سنہ دو ہزار بارہ ویمبلڈن چیمپیئن شپ کےخواتین کے مقابلے میں امریکہ کی سرینا ولیمز نے پانچویں بار کامیابی حاصل کر لی ہے۔

انہوں نے پولینڈ کی اگنیئشکا ردوانسکا کو فائنل میں چھ ایک، پانچ سات اور چھ دو سے شکست دی۔

خواتین کا فائنل دوگھنٹے اور دو منٹ جاری رہا۔

عالمی نمبر چھ سرینا نے پہلا سیٹ باآسانی چھ ایک سے جیتا جس میں اگنیئشکا ان کو مشکل میں نہیں ڈال سکیں۔

تاہم دوسرے سیٹ کے دوران بارش کی وجہ سے تعطل ہوا۔ وقفے کے بعد جہاں سرینا ولیئمز کا ’فور ہینڈ‘ قدرے کمزور ہونے لگا۔ادھر پولش کھلاڑی نے بہتر کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے دوسرا سیٹ پانچ سات سے جیت لیا۔

تیسرے سیٹ میں ولیئمز دو بار ’بریک‘ تک پہنچے کے بعد چھ دو سے کامیاب ہو گئیں۔

اپنی فتح کے موقع پر انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال ٹانگ کے زخمی ہونے اور اس کے نتیجے میں دیگر بیماری کے بعد ان کے خیال میں بھی نہیں تھا کہ وہ ومبلڈن جیت سکیں گی۔ انہیں چوٹوں کی وجہ سے وہ عالمی ٹینس سے تقریباً گزشتہ ایک سال تک باہر رہیں ہیں۔

اس سے پہلے وہ سنہ دو ہزار دو، تین، نو اور دو ہزار دس میں یہ ٹورنامنٹ جیتیں تھیں۔

ادھر اگنیئشکا ردوانسکا اگرچہ خواتین کی عالمی ٹینس درجہ بندی میں تیسرے نمبر پر ہیں تاہم جمعے کے روز سانس کی بیماری کے باعث ایک نیوز کانفرنس منسوخ کرنے کے بعد ان کی صحت کے بارے میں خدشات تھے۔

گزشتہ تہتر سالوں میں وہ پولینڈ کی پہلی گرینڈ سلیم فائنل کھیلنے والی کھلاڑی ہیں۔

تیس سالہ امریکی کھلاڑی کی یہ چودویں گرینڈ سلیم کامیابی ہے۔

یاد رہے کے مردوں کے مقابلے کا فائنل اتوار کے روز برطانیہ کے اینڈی مرئے اور سوئٹزرلینڈ کے راجر فرڈرر کے بیچ کھیلا جائے گا۔