نیٹو کو رسد کی فراہمی کا معاہدہ طے پا گیا

پاکستان اور امریکا کے درمیان افغانستان میں نیٹو افواج کے لیے رسد کی فراہمی کا پہلا باضابطہ سمجھوتہ طے پا گیا ہے۔

اس معاہدے پر منگل کو راولپنڈی میں امریکی اہلکار رچرڈ ہوگلنڈ اور پاکستان کے سیکرٹری دفاع عارف یاسین نے دستخط کیے۔

دونوں ممالک کے درمیان طے پانے والا یہ اس قسم کا پہلا تحریری معاہدہ ہے۔

اس موقع پر امریکی سفارت کار نے کہا کہ پاکستان کو کولیشن سپورٹ فنڈ کی مد میں ایک ارب ڈالر سے زائد کی رکی ہوئی رقم فوراً ادا کر دی جائے گی ۔

گذشتہ نومبر مہمند ایجنسی میں سلالہ چیک پوسٹ پر نیٹو افواج کے حملے کے بعد پاکستان نے نیٹو کی رسد بند کر دی تھی جسے کئی ماہ کی بات چیت کے بعد تین جولائی کو کھولا گیا۔